مولانا کا دھرنا کامیاب ہے ، وہ زیرک سیاستدان ہے، وہ بند گلی میں نہیں ہے

پی ایس پی چیئرمین مصطفی کمال کی میڈیا ٹاک
کرتار پور راہداری کی افتتاج  سکھ یاتریوں کو بہت مبارک ہو  بے باک قدم اٹھایا ہے جب انڈیا نے کشمیر پر قبضہ کر لیا ہے،   اِیسے حساس وقت پر پاکستان کا یہ بے باک قدم ہے ،  عمران خان کو نیک تمنائیں پیش کرتا ہوں  9تاریخ کو کرتار پور بارڈر کے افتتاح کرنے کے بعد پاکستانیوں کو رشتہ داروں سے ملنے کے لیے بھارتی بارڈر کھولنے کا اعلان کرے،  وزیراعظم اپوزیشن لیڈر کے ساتھ بیٹھ کر بات کرنے کے لیے تیار نہیں ہے، جسکی وجہ سے ملک میں آئینی بحران پیدا ہوگیا ہے  سںندھ کا مسئلہ وزیر اعلی سندھ حل کرینگے،  وزیراعظم دورہ کراچی کے موقع پر وِزیر اعلی کو نہیں مدعو کرتے ہیں،  موجودہ حکومت کا رویہ بالکل بھی جمہوری نہیں ہے،  جمہوریت کا حسن ہے کہ اقتدار میں آنے کے بعد نمائندے صرف ملک کی فلاح چاہتے ہیں،  مولانا کا دھرنا کامیاب ہے ، وہ زیرک سیاستدان ہے، وہ بند گلی میں نہیں ہے ،

اپنا تبصرہ بھیجیں