وفاقی کابینہ :اینٹی منی لانڈرنگ کمیٹی،ایف اے ٹی ایف سیکرٹریٹ بنانے کی منظوری نوازشریف کی ضمانت کا فیصلہ قبول

وفاقی کابینہ کے اجلاس میں اینٹی منی لانڈرنگ کمیٹی،ایف اے ٹی ایف سیکرٹریٹ بنانے کی منظوری، متروکہ وقف بورڈ کی اراضی پر سکول ، ہسپتال تعمیر کرنے اور ہفتہ وار ای نیوز لیٹر کے اجرا کافیصلہ کیاگیا جبکہ فردوس عاشق اعوان نے کہاہے کہ نوازشریف کی ضمانت کا فیصلہ قبول ہے ،آصف زر داری کا فیصلہ بھی عدالتیں کرینگی ۔ وزیراعظم کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا، جس میں اینٹی منی لانڈرنگ ایکٹ کے تحت خصوصی کمیٹی بنانے کی منظوری دی گئی جب کہ ایف اے ٹی ایف سیکرٹریٹ قائم کرنے کی بھی منظوری دی گئی جس کے سربراہ وفاقی وزیر حماد اظہر ہوں گے ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں آزادی مارچ پر ایک گھنٹہ تک گفتگو ہوئی۔ وزیراعظم نے کہا کہ احتجاج پرامن اور قانون کے دائرے میں ہو تو کوئی رکاوٹ نہیں کھڑی کریں گے اور معاہدے کی خلاف ورزی کی گئی تو سخت کارروائی ہو گی ، حکومت کسی ڈیل کا حصہ نہیں اور نہ ہی کرپشن کیسز پر کوئی سمجھوتہ ہوگا۔ میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے معاون خصوصی اطلاعات ونشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ ہم بیمار نواز شریف سے سیاسی مقابلہ نہیں کرنا چاہتے ، ہم چاہتے ہیں کہ وہ صحت مند ہو کر سیاست کے اکھاڑے میں واپس آئیں۔ امید ہے کہ نواز شریف ضمانت کے عرصے میں اپنی صحت پر توجہ دیں گے ۔ آزادی مارچ پر بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ مولاناکے مطالبات مضحکہ خیز ، عوام لاتعلق ہیں۔ آتشیں اسلحے کے ساتھ کوئی ریاست کو للکارے گا تو ریاست خاموش تماشائی نہیں بنے گی۔کابینہ اجلاس میں شاہ محمود قریشی اور شہریار آفریدی کی ہمشیرہ اور سپیکر اسد قیصر کے چچا کیلئے فاتحہ خوانی کی گئی۔ کابینہ اجلاس میں 17 نکاتی ایجنڈا زیرغور آیا ۔آرٹسٹ فنڈ کو وزارت اطلاعات کے ماتحت کرنے کے معاملہ موخر کیا گیا۔ایس این جی پی ایل کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کی تشکیل نو ،چیئرمین متروکہ وقف املاک بورڈ کی تعیناتی کی منظوری دی گئی،متروکہ وقف بورڈ کی اراضی پر سکول اور ہسپتال تعمیر کئے جائیں گے ۔ احساس پروگرام کے تحت4سال میں 50ہزار سکالر شپس دیئے جائیں گے ،داسو ڈیم منصوبہ کی ایکنک میں منظوری کے بعد آج کابینہ نے بھی توثیق کر دی ،روس کے ساتھ معاہدے کی منظوری دی گئی۔وفاقی کابینہ نے بے نامی ٹرانزیکشن (ممانعت )ایکٹ2017ئکے تحت ایڈجوڈیکیٹنگ اتھارٹی کے ممبران ،کراچی ، لاہور، پشاور اور ملتان کے بعض مخصوص علاقوں میں کثیر المنزلہ عمارات کی تعمیر کی اجازت دینے ،سردیوں میں بجلی کے نرخ کم کرنے کی ایک تجویز پر غور کیا جا رہا ہے ،ہر ہفتہ ای نیوز لیٹر کا اجراۂوگا ، ملک بھر کے تمام ائیر پورٹ پر بچوں کے لئے ” پلے ایریاز” کے قیام کا فیصلہ کیا ہے ۔فردوس عاشق نے کہا کہ ہم میڈیا کے ورکرز سے مل کر لائحہ عمل بنا رہے ہیں،اس سلسلے میں وزیر اعظم میڈیا مالکان سے بھی مل رہے ہیں، میڈیا انڈسٹری میں زیادہ تر ملازمین کی تعداد 50 ہزار سے کم تنخواہ لیتی ہے ، اکثریت کے درد پر مرہم رکھنا اور بولنا حکومت کی ذمہ داری ہے ، معاملات جلد کابینہ میں لا کر منظوری لی جائے گی۔