مسئلہ کشمیر کو کسی صورت دبایا نہیں جا سکتا، اگر کوئی ایسا سوچ رہا ہے تو یہ اُس کی خام خیالی ہے: خالد محمود لنگڑیال (منیجنگ ڈائریکٹر پنجاب ڈویلپرز، منڈی بہاء الدین)

پنجاب ڈویلپرزمنڈی بہاء الدین کے منیجنگ ڈائریکٹر خالد محمود لنگڑیال کا نام کسی تعارف کا محتاج نہیں۔ اُنھوں نے ٹاؤن ڈویلپنگ میں جو شہرت حاصل کی ہے وہ کم لوگوں کے حصے میں آتی ہے۔منڈی بہاء الدین کے ٹاؤن ڈویلپرز کو ایک پلیٹ فارم پر لاکر ایک ایسوسی ایشن کا حصہ بنانے میں بھی اُن کا اہم کردار ہے۔ خالدمحمود لنگڑیال جو اُمت مسلمہ اور خاص طور پر کشمیر کے مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کے سخت خلاف ہیں اور تمام انسانوں کو آزادی سے جینے کا حق دینے کے داعی ہیں نے کشمیر کی موجودہ صورتحال پر بات کرتے ہوئے کہا کہ عالمی طاقتوں کو مسئلہ کشمیر کی سنگینی کا احساس کرنا چاہیے اور بھارت پر دباؤ ڈالنا چاہیے کہ وہ کشمیریوں کو اُن کا حق دے، کشمیری آزادی مانگ رہے ہیں جو اُن کا حق ہے اور پاکستان اِس سلسلے میں اُن کا ہر طرح ساتھ دے رہا ہے اور دیتا رہے گا۔ کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم اَب کسی سے ڈھکے چھپے نہیں۔ اَب بھی اگر مودی حکومت اور بھارت کا ہاتھ نہ روکا گیا تو نتائج بھیانک ہو سکتے ہیں۔ یہ دو ایٹمی طاقتوں کا مسئلہ ہے۔ میں سمجھتا ہوں کہ کشمیر خود ایک ایٹم بم کی حیثیت اختیار کر چکا ہے اگر اُسے آزادی نہ ملی تو وہ کسی بھی وقت پھٹ سکتا ہے اور پھر اِس کا نقصان پاک، بھارت یا اِس خطے کو نہیں پوری دُنیا کے امن کو ہوگا، اگر کوئی سمجھتا ہے کہ کشمیر کے معاملے کو وقت کے ساتھ دبایا جا سکتا ہے تو یہ اُس کی خام خیالی ہے۔ بھارت نے بھی اپنی ہٹ دھرمی اپنائی ہوئی ہے لیکن وہ زیادہ عرصہ کشمیریوں کو اپنا غلام نہیں رکھ سکتا۔ اَب آزادی کا سورج طلوع ہونے والا ہے اور اِن شاء اللہ ہم سب ملکر وہ دن ضرور دیکھیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں