تمام ہائی ویز پر وزن کے کانٹوں کی تنصیب حکومت وزارت مواصلات اور نیشنل ہائی وے اتھارٹی کی ذمہ داری ہے جس میں وہ بری طرح ناکام ہیں

تحریک استقلال کے مرکزی صدر رحمت خان وردگ نے 16 اکتوبر کو کراچی حیدرآباد موٹروے پر نیشنل ہائی وے کے وزن کے کانٹوں پر ڈرائیوروں پر ہونے والے تشدد کی مذمت کرتے ہوئے واقعے میں شہید اور زخمی ہونے والے ڈرائیوروں کے درجات کی بلندی اور اہل خانہ کیلئے صبر جمیل پر اجر عظیم کی دعا کی اور کہا کہ اس بدترین واقعے کی اصل ذمہ دار نااہل حکومت نااہل وزارت مواصلات اور نااہل نیشنل ہائی وے اتھارٹی ہے جن کی نااہلی کے باعث یہ بدترین واقعہ پیش آیا اور شہادتیں ہوئی کیونکہ اس وقت ملک میں ٹرانسپورٹ میں وزن اٹھانے کے متوازی نظام چل رہے ہیں اور ناانصافی اور کرپشن نے عروج پر ہے کراچی سے اوورلوڈ گاڑیاں نیشنل ہائی وے براستہ ٹھٹھہ حیدرآباد اور پھر سیون دادو لاڑکانہ شکارپور کشمور کے راستے انڈس ہائی وے استعمال کرکے نیشنل ہائی وے آرڈیننس 2000 کی دھجیاں اڑا رہی ہیں اور تمام ہائی ویز پر وزن کے کانٹوں کی تنصیب حکومت وزارت مواصلات اور نیشنل ہائی وے تھرٹی کی ہے جس میں وہ بری طرح ناکام ہیں اور اس سلسلے میں میں نے کئی خطوط ارسال کیے لیکن جو اب تک دینے کی زحمت گوارا نہیں کی جاتی انہوں نے کہا کہ بھارت میں اوورلوڈنگ پر 1965 سے پابندی عائد ہے اور شہروں سے نکلتے ہیں گاڑیوں کا مین شاہراہ پر وزن کیا جاتا ہے اور اضافی وزن لے جانے والی گاڑی سے اضافی وزن اتار کر آنے کے بعد گاڑی کو روانہ کردیا جاتا ہے اور جس پارٹی کا مال ہوتا ہے اسے بلوا کر بھاری جرمانے کے بعد مال دوسری گاڑی میں لے جانے کی اجازت ہوتی ہے میں نے وزارت مواصلات اور نیشنل ہائی وے اتھارٹی کولیٹر لکھا تھا کہ کراچی سمیت تمام بڑے شہروں کی تمام انڈسٹریز ریفائنریز پرپوز سمیت لوڈنگ کرنے والی پارٹیوں کو لیٹر جاری کریں یا ہماری شعر کے ذریعے متنبہ کیا جائے کہ ایکسل لوڈ سے زیادہ وزن نہ دیا جائے ۔خلاف ورزی کی صورت میں لوڈنگ کرنے والوں کو بھاری جرمانے اور سزا دی جائے ۔انہوں نے کہا کہ ہر گاڑی پر فی ایکسل لوڈ کے مطابق وزن لے جانے کی صلاحیت اس گاڑی کے دروازے پر لکھی ہونی چاہیے اور اس سے زیادہ وزن لوڈنگ کے وقت کسی صورت نہ دیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ نااہل حکومت نااہل وزارت مواصلات اور نااہل نیشنل ہائی وے اتھارٹی معصوم ڈرائیوروں کی شہادتوں کی ذمہ دار ہیں ۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ فوری طور پر تمام ہائی ویز پر اوور لوڈنگ پر پابندی عائد کرکے وہ لوگ گاڑیوں کو جرمانے کے بعد سفر کی اجازت دی جائے اور جہاں سے اوورلوڈنگ کی جارہی ہے ان کو بھاری جرمانے اور سزائیں دی جائیں بصورت دیگر ملک میں ٹرانسپورٹ کے کی متوازی نظام چلتے رہیں گے اور نہ انصافی اور کرپشن کو عروج ملے گا جس سے غریب کو موت کے علاوہ کچھ نہیں بول سکتا