اے آر وائی کی گاڑیاں رات کے وقت اور کبھی کبھی دن کی روشنی میں ناظم آباد نمبر 4 میں میرے گھر کی فصیل کے ساتھ کھڑی ہوتی ہیں

اے آر وائی کے عہدیداروں کی گاڑیاں رات کے وقت اور کبھی کبھی دن کی روشنی میں ناظم آباد نمبر 4 میں میرے گھر کی فصیل کے ساتھ کھڑیور جب پولیس ان کے خلاف کارروائی کرنا چاہتی ہے تو ، ڈرائیور میڈیا / اے آر وائی کی پناہ لیتے ہیں ، نتیجے میں پولیس اہلکار ایکشن نہیں لیتے۔ میں نے ان حقائق کو اے آر وائی کے عہدیداروں کو آگاہ کیا ہے لیکن کوئی رگ نہیں دی۔ علاقے کے باشندے خوفزدہ ہیں کہ یہ کاریں اور ڈرائیور بھی رات کے دیر سے اپنے منشیات ، شراب وغیرہ کے استعمال کی وجہ سے مجرمانہ سرگرمیوں میں ملوث ہیں۔ اب میرے جونیئرز / ایڈوکیٹس ہائی کورٹ کے ذریعے قانونی کارروائی کرنے کا ارادہ کر رہے ہیں۔

رضوان اے صدیقی