نواز شریف کو زہر دینے کا الزام

حسین نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر نے نواز شریف کو زہر دینے کا الزام عائد کر دیا، سابق وزیراعظم کو پیر کی شب کو طبیعت ناساز ہونے پر ہنگامی بنیادوں پر لاہور کے سروسز ہسپتال منتقل کیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق لاہور کے اڈیالہ جیل میں قید سابق وزیراعظم نواز شریف کی حالت بگڑ گئی۔ نواز شریف کے معالج ڈاکٹر عدنان کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ سابق وزیراعظم کی پلیٹ لیٹس کی رپورٹ غیر تسلی بخش آئی ہے۔
نواز شریف کی تازہ ترین میڈیکل رپورٹ آنے کے بعد نیب نے انہیں فوری بنیادوں پر علاج کیلئے ہسپتال منتقل کرنے کا فیصلہ کیا۔ بتایا گیا ہے کہ نیب نے نواز شریف کو لاہور کے سروسز ہسپتال میں علاج کیلئے منتقل کر دیا۔ سروسز ہسپتال میں نواز شریف کے مزید ٹیسٹ کیے جائیں گے۔

نواز شریف کی صحت کی خرابی سے متعلق ان کے داماد محمد صفدر اور صاحبزادے حسین نواز کی جانب سے سنگین الزام عائد کیا گیا ہے۔

محمد صفدر اور حسین نواز نے الزام عائد کیا ہے کہ نواز شریف کو زہر دیا گیا ہے جس باعث ان کی زندگی اب خطرے سے دوچار ہے۔ تاہم ڈاکٹرز کی جانب سے اس الزام کی تصدیق نہی کی گئی۔ نواز شریف کیلئے تشکیل دیے گئے میڈیکل بورڈ کے ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم کے پلیٹ لیٹس کاونٹس کی کمی کی کئی وجوہات ہو سکتی ہیں۔ ان وجوہات میں ڈینگی کا مرض لاحق ہونا یا ادویات کا زیادہ استعمال بھی ہو سکتا ہے۔