انکم سپورٹ پروگرام سے مستفید ہونے والی خواتین معاشرے کے غریب طبقے کی خواتین ہیں۔

حکومت پاکستانبینظیر انکم سپورٹ پروگرام*انکم سپورٹ پروگرام سے مستفید ہونے والی خواتین معاشرے کے غریب طبقے کی خواتین ہیں۔حکومت پاکستان نے غربت کے عالمی دن کے موقع پر بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کے تحت ملنے والا وظیفہ 5000 سے بڑھاکر 5500 کردیا ہے  کراچی (    )   بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کے زیر اہتمام غربت کے عالمی دن کے موقع پر آج بی آئی ایس پی کراچی ڈویزن میں ایک تقریب کا انعقاد کیا گیا ۔ تقریب میں بی آئی ایس پی حکام اور بی آئی ایس پی کی مستحق خواتین اور انکے خصوصی بچوں کی ایک بڑی تعداد نے شرکت کی ۔ تقریب کا مقصد بی آئی ایس پی کےمستحق خاندانوں کی حوصلہ افزائی کرنا تھا اس موقع پر شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے ، ڈاریکٹر جنرل بی آئی ایس پی سندھ ، عبدرحیم شیخ نے کہا کہ بی آئی ایس پی ملک کا ایک وسیع سوشل سیفٹی پروگرام ہے جو ابتک 57 لاکھ خاندانوں کی کفالت کررہا ہے۔ بی آئی ایس پی پورے ملک میں خواتین کو بااختیار بنانے  کا واحد مرکز ہے۔عبدرحیم شیخ نے مزید کہا کہ خواتین کو با اختیار بنانے سے خطے میں غربت کے خاتمے کو مدد مل سکتی ہے اور بی آئی ایس پی غربت کے خاتمے کی کوششوں میں مخلص ہے اور پورے ملک کے مستحق خاندانوں کو مالی امداد فراہم کرنے کے لیے پر عزم ہیں۔احساس پروگرام کے ذریعے سود سے پاک قرضوں ، پیشہ ورانہ اور مہارتوں کی تربیت کے ذریعے غریب عوام کو ریلیف فراہم کرے گا۔ حکومت پاکستان نے احساس پروگرام میں حکمت عملی کے تحت غربت سے فارغ التحصیل ہونے کا اقدام شروع کیا ہے اور اس کا مقصد غریب سے غریب ترین گھرانوں کو فارغ التحصیل کرنا ہے۔ تاکہ وہ معاشی اور معاشرتی خوشحالی کی راہ پر گامزن کر سکیں۔ اگلے چار سالوں کے دوران ہر مہینے میں تقریباً 80 ھزار روپیہ سود سے پاک دیا جائے گا۔بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کے زیر اہتمام غربت کے عالمی دن کے موقع پر ڈائریکٹر ہیڈکوارٹر طاہر نواز، ڈپٹی ڈائریکٹر ذولقرنین، ڈویژن ڈائریکٹر کراچی ریاض الحسن، ڈویژن ڈائریکٹر لیاری ذولفقار علی ابڑو، میڈیا آفیسر شفقت علی، بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کی بینیفشریز اور میڈیا نمائندگان موجود تھے

اپنا تبصرہ بھیجیں