وفاقی حکومت کا سندھ میں آٹے کی قیمت میں 8 روپے فی کلو کمی کا عندیہ

وفاقی حکومت کا سندھ میں آٹے کی قیمت میں 8 روپے فی کلو کمی کا عندیہ اگلے ہفتے سندھ میں آٹے کی قیمتوں میں 8 روپےتک کی کمی آئے گی۔ محمود مولویگورنر سندھ کی ہدایات پر ٹھوس اقدامات اٹھائے جارہے ہیں ۔ پنجاب اور سندھ میں آٹے کی قیمتیں برابر ہوں گی۔ رہنماء پی ٹی آئی محمود مولوی رہنماءپاکستان تحریک انصاف محمود مولوی نے کہا ہے کہ سندھ میں آٹے اور گندم کی قیمتوں میں کمی لانے کے لئے مناسب اقدامات اٹھائے جارہے ہیں ۔ گورنر سندھ کی ہدایات پراگلے ہفتے تک سندھ میں آٹے کی قیمتوں میں 8 روپے کی کمی آئے گی۔ کراچی میں تاجروں کے وفد سے ملاقات کے دوران محمود مولوی نے کہا کہ پنجاب اور سندھ میں آٹے کی قیمتیں برابر ہوں گی۔ وفاقی حکومت کی بہترین پالیسیز کی بدولت پنجاب میں آٹے کی قیمت 40روپے فی کلو ہےمگر عنقریب سندھ میں آٹے کی قیمت 8 روپے کم ہوکر 40 روپے فی کلو ہوجائے گی۔ محمود مولوی نے کہا کہ وفاقی حکومت سندھ کے مسائل کے بخوبی آگاہ ہے اور انہیں حل کرنے کے لئے متحرک ہےاسی ضمن میں سندھ میں گندم کا بحران آئندہ ہفتے حل کرلیا جائے گا جس سے مہنگائی میں نمایاں کمی آئے گی۔ گزشتہ 6 مہینوں سے سندھ میں گندم اور آٹے کی مصنوعی بحران پیدا کیا جارہا ہے جس کی وجہ سے آٹے کی قیمتوں میں ہوش ربا اضافہ ہواتاہم گورنر سندھ کی ہدایات پر آٹے کی قیمتوں میں کمی آجائے گی ۔ محمود مولوی کا کہنا تھا کہ ذخیرہ اندوزی کرنے والوں کے خلاف ایکشن لینے کی ضرورت ہے ۔ سندھ میں گندم کی بڑے پیمانے پر ذخیرہ اندوزی لمحہ فکریہ ہے جس سے سندھ کی عوام متاثر ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں