سرفراز کا سندھ کی کپتانی سے انکار، اسد شفیق قیادت کرینگے

سری لنکا کے ہاتھوں شکست کے بعد سرفراز احمد کی کپتانی پر سوالات اٹھائے جارہے ہیں۔ اتوار کو اچانک ہونے والی پیش رفت میں سری لنکا کے خلاف ٹی ٹوئنٹی سیریز کے نتیجے کے بعد فیصل آباد میں پریس کانفرنس میں سخت سوالات سے دلبرداشتہ ہونے والے پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے قومی ٹی ٹوئنٹی کرکٹ ٹورنامنٹ میں سندھ کی کپتانی سے انکار کردیا۔

سندھ نے سرفراز احمد کے انکار کے بعد اسد شفیق کو کپتان مقرر کردیا۔ ٹورنامنٹ کے آغاز سے ایک روز قبل فیصل آباد میں فوٹو سیشن ہوا تھا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ہفتے کو فیصل آباد میں ٹورنامنٹ سے قبل ہونے والی پریس کانفرنس میں سرفراز احمد سے سخت سوالات کئے گئے اور بعض صحافی مبینہ طور پر اخلاقی حدود پار کرگئے۔

سوالات کرنے والوں کو پی سی بی حکام کنٹرول کرنے میں ناکام رہے۔ عینی شاہدین کے مطابق صحافیوں نے سرفراز احمد کو شکست کا ذمے دار قرار دیا۔جس کے بعد سرفراز احمد نے ٹیم انتظامیہ کو بتایا کہ میں ٹورنامنٹ میں کپتانی نہیں کرنا چاہتا اور عام کھلاڑی کی حیثیت سے کھیلوں گا۔

سرفراز احمد عام کھلاڑی کی حیثیت سے بیٹنگ اور وکٹ کیپنگ پر توجہ مرکوز کرنا چاہتے ہیں۔ وہ قومی ٹی ٹوئنٹی ٹورنامنٹ میں بھی چوتھے نمبر پر کھیلیں گے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ بدتمیزی سے سرفراز احمد اپ سیٹ تھے اور انہوں نے کپتانی کرنے سے معذرت کر لیاس میں بھی سرفراز احمد موجود تھے