عاقب جاوید کی مصباح الحق پر تنقید

سابق فاسٹ بولر عاقب جاید کا کہنا ہے کہ مصباح الحق کو ایک ہی وقت میں سلیکٹر اور ہیڈ کوچ کی ذمہ داری دینا درست فیصلہ نہیں، وہ جب تک عہدے پر ہیں کسی نوجوان کھلاڑی کو موقع نہیں دیں گے۔
انہوں نے سوال اٹھایا کہ عمر اکمل اور احمد شہزاد کو کس پرفارمنس پر ٹیم میں شامل کیا گیا ہے
سابق فاسٹ بولر عاقب جاوید نے جیونیوز کے پروگرام جیو پاکستان میں بات کرتے ہوئے کہا کہ عمر اکمل کس پرفارمنس پر ٹیم میں واپس آئے پرفارم تو عابد علی نے کیا، فخر زمان کو ٹی ٹوئنٹی سے نکال کر احمد شہزاد کا شامل کرنا بھی سمجھ سے باہر ہے۔
یہ بھی پڑھیے: مصباح کی تقرری میرٹ پر نہیں ہوئی، محمد یوسف
سابق فاسٹ بولر نے کہا کہ ٹیم سلیکشن میں وقار یونس کا تو کوئی عمل دخل نہیں ہوتا ہوگا ورنہ عمر اکمل اور احمد شہزاد تو ٹیم میں نہیں آتے، کیونکہ جب وقار ہیڈ کوچ تھے وہ خود ان دونوں کے بارے میں خط لکھ چکے ہیں۔
واضح رہے کہ عمر اکمل اور احمد شہزاد طویل عرصہ بعد قومی ٹی 20 کرکٹ ٹیم کا حصہ بنے ہیں، سری لنکا کےخلاف تین میچوں کی سیریز کے پہلے دو میچز میں دونوں بیٹسمینوں کی کارکردگی انتہائی مایوس کن رہی ہے عمر اکمل دونوں میچوں میں ’گولڈن ڈک‘ پر آؤٹ ہوئے جبکہ احمد شہزاد نے بالترتیب 4 اور 13 رنز بنائے