سندھ حکومت کے ترجمان مشیر قانون ، ماحولیات و ساحلی ترقی بیرسٹر مرتضی وہاب کی ہدایت پرسندھ انوائرونمنٹل پروٹیکشن ایجنسی (سیپا) کی ٹیم نے اتحاد ٹاون بلدیہ میں بیٹریاں پگھلانے والے غیر قانونی کارخانوں پر چھاپے مار کر کئی غیر قانونی کارخانے سربمہر کردئیے

سندھ حکومت کے ترجمان مشیر  قانون ، ماحولیات و ساحلی ترقی بیرسٹر مرتضی وہاب کی ہدایت پرسندھ انوائرونمنٹل پروٹیکشن ایجنسی (سیپا) کی ٹیم نے اتحاد ٹاون  بلدیہ میں بیٹریاں پگھلانے والے غیر قانونی کارخانوں پر چھاپے مار کر کئی غیر قانونی کارخانے سربمہر کردئیے کارخانوں میں کھلے فضاء میں آگ جلا کر بیٹریاں پگھلائی جارہی تھی بیٹریوں پگھلا کر ان میں سے سیسہ نکالا جاتا ہے کھلی فضاء میں بیٹریاں پگھلانے سے نہ صرف ماحول آلودہ بلکہ اطراف کے مکینوں کی صحت بری طرح متاثر ہورہی تھی۔ ترجمان کے مطابق مشیر ماحولیات سندھ بیرسٹر مرتضی وہاب اور سیکریٹری محکمہ ماحولیات خان محمد مہر کی ہدایت پر ڈپٹی ڈائریکٹر وارث علی گبول کی سربراہی میں  سیپا ٹیم نے گزشتہ روز اتحاد ٹاؤن میں بڑی کارروائی کے زرئعے بیٹریاں پگھلانے والے کئی غیر قانونی کارخانوں کو سیل کردیا، انسپکٹر راؤ زیشان، فیصل ملک، زیشان علی سمیت سیپا کے دیگر انسپکٹرز آپریشن میں شریک تھے سیپا ٹیم کے ہمراہ پولیس کی نفری بھی موجود تھی سیپا حکام کے مطابق اتحاد ٹاؤن میں سیل کئے گئے کوئی کارخانے رجسٹرڈ نہیں تھے تمام کارخانے غیر قانونی طور پر چلائے جارہے تھے جو ماحولیاتی قوانین کی کھلم کھلا خلاف ورزی کررہے تھے علاقہ مکینوں کی شکایت اور وزیراعظم کے سٹیزن پورٹل کی جانب سے ان کارخانوں سے متعلق شکایات موصول ہوئی تھیں جس کے بعد انکے خلاف آپریشن کیا گیا۔ سیپا حکام کا کہنا تھا کہ بیٹریاں جلا کر سیسہ نکالنے سے شدید قسم کی آلودگی پھیلتی ہے۔ان کارخانوں کی وجہ سے اطراف کے علاقوں کے مکین ازیت کا شکار تھے۔بیٹریاں پگھلانے کے خطرناک عمل سے لوگ امراض چشم، دمے، سانس اور پھیپھڑوں کی خطرناک بیماریوں میں مبتلا ہوتے ہیں جبکہ بچوں کا آئی کیو لیول بھی شدید متاثر ہوتا ہے مشیر ماحولیات سندھ بیرسٹر مرتضی وہاب نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس غیر قانونی دھندے میں مافیاز ملوث ہیں جو لوگوں کی جانوں سے کھیل رہے ہیں بیٹریاں پگھلانے کے گھناونے کاروبار سے ماحولیاتی آلودگی پھیلتی ہے انہوں نے کہا کہ خدارا ایسے گھناؤنے کاروبار سے لوگوں کی جانوں سے نہ کھیلا جائے۔بیٹریاں پگھلانے کا کام کرنے والے افراد خود بھی بری طرح متاثر ہوتے ہیں۔کامیاب کارروائی پر مشیر ماحولیات سندھ بیرسٹر مرتضی وہاب ، سیکریٹری محکمہ ماحولیات نے سیپا کی ٹیم کو شاباش دی اور اس طرح کی کارروائیاں جاری رکھنے کی ہدایت کی

اپنا تبصرہ بھیجیں