کرپشن کا الزام ثابت : پی آئی اے کے ڈپٹی جنرل منیجر کو ملازمت سے برطرف کردیا گیا

پی آئی اے کی کیٹرنگ وین کی گمشدگی میں ملوث ڈپٹی جنرل منیجر کو ملازمت سے برطرف کردیا گیا، حسن محمود کو اختیارات کے ناجائز استعمال اور مبینہ کرپشن پر نوکری سے برخاست کیا گیا۔
تفصیلات کے مطابق پی آئی اے میں احتساب کا عمل جاری ہے، اب افسران بھی احتساب کی گرفت میں آگئے، اس سلسلے میں پی آئی اے کی کیٹرنگ وین کی گمشدگی میں ملوث ڈپٹی جنرل منیجر کو تحقیقات کے بعد ملازمت سے برطرف کردیا گیا ہے۔
ذرائع کے مطابق مذکورہ افسر کواشیائے خورونوش سے بھری کیٹرنگ وین کی گمشدگی پرشوکاز نوٹس جاری کیا گیا تھا۔
حسن محمود قریشی نے لاہور سے سیالکوٹ کی کیٹرنگ وین کے لئے جعلی گیٹ پاس جاری کیا تھا جبکہ سیالکوٹ ایئرپورٹ کے متعلقہ حکام نے کیٹرنگ وین روانگی کی کوئی درخواست ہی نہیں کی تھی۔

کیٹرنگ وین کی دستیابی پر اس میں موجود تمام اشیائے خورد ونوش غائب تھیں، نومبر2018 میں ڈپٹی فوڈ سروسز (نارتھ) حسن محمود قریشی کو شوکاز نوٹس جاری کیا گیا۔
بعد ازاں محکمانہ انکوئری میں بھی حسن محمود قریشی پر عائد الزامات صحیح ثابت ہوئے، دو روز قبل سی ای وی پی آئی اے کے سامنے بھی ڈپٹی جی ایم اپنی بے گناہی ثابت نہیں کرسکے۔ ذرائع کے مطابق پی آئی اے انتظامیہ نے ڈپٹی جنرل مینجر حسن محمود کو اختیارات کے ناجائز استعمال اور کرپشن کے الزامات ثابت ہونے پر نوکری سے برخاست کیا-report -salahuddin-ary

اپنا تبصرہ بھیجیں