بگ بیش میں کھیلنا فائدہ مند ثابت ہوگا، ندا ڈار

پاکستان ویمن کرکٹ ٹیم کی آل راؤنڈر ندا ڈار کا کہنا ہے کہ بگ بیش میں کھیلنا صرف ان کے لیے ہی نہیں بلکہ پاکستان ویمن کرکٹ کی دیگر کھلاڑیوں کے لیے بھی فائدہ مند ثابت ہوگا۔
ندا ڈار نے گزشتہ دنوں بگ بیش ٹیم سڈنی ٹھنڈرز سے معاہدہ سائن کیا ہے جس کے بعد ندا ڈار لیگ میں شرکت کرنے والی پہلی پاکستانی خاتون کرکٹر بن گئی ہیں
جمعرات کو جیو سے خصوصی گفتگو میں ندا ڈار نے کہا کہ بگ بیش ہو یا کوئی اور ٹورنامنٹ وہ بطور پاکستان کی نمائندہ وہاں شرکت کرتی ہیں اور اس ٹورنامنٹ میں بھی ان کی کوشش ہوگی کہ بہتر سے بہتر پرفارم کرکے پاکستان کا نام روشن کریں۔
ندا ڈار کا کہنا تھا کہ بگ بیش میں کھیلنا ان کا خواب تھا، آسٹریلیا میں ٹاپ لیول کی کرکٹ ہوتی ہے، ٹاپ پلیئرز سے سیکھنے کو ملے گا، بڑے کھلاڑیوں کا مائینڈ سیٹ اور گیم پلان پتہ چلتا ہے۔
ندا ڈار نے کہا کہ ورلڈ ٹی ٹوینٹی بھی آسٹریلیا میں ہونا ہے، یہ لیگ کھیلنے سے جو کچھ بھی سیکھوں گی وہ ساتھی کرکٹرز کے ساتھ بھی شیئر کریں گی۔
ایک سوال پر ندا ڈار نے کہا کہ بگ بیش ٹیم نے جو ان پر اعتماد کیا ہے اس پر پورا اترنے کی وہ پوری کوشش کریں گی۔
دوسری جانب پاکستان کرکٹ بورڈ نے ندا ڈار کو بنگلہ دیش کے خلاف سیریز سے ریلیز کردیا ہے، پی سی بی کا کہنا ہے کہ تمام صورتحال کا جائزہ لینے کے بعد ندا ڈار کو بنگلہ دیش کی سیریز چھوڑ کر بگ بیش لیگ کھیلنے کی اجازت دی گئی ہے۔
واٖضح رہے کہ بنگلہ دیش ویمن کرکٹ ٹیم پانچ ایک روزہ میچز کی سیریز کے لیے اس ماہ کے آخر میں لاہور پہنچ رہی ہے