میرپورخاص اور اس کے گرد نواح میں چوروں اور ڈکیتوں کا راج ہے ایک ہفتے میں چوری اور ڈکیتی کی تقریبا ففٹی مکمل ہو چکی گئی، کراچی جانے والی مسافر کوچ میں میرپورخاص سے سوار ہونے والے چھ مسلح ڈاکو مسافروں سے لاکھوں روپے نقدی، موبائل فونز، طلائی زیورات اور قیمتی سامان لوٹ کر فرار ہو گئے،


میرپورخاص ==تحسین احمد خان=== میرپورخاص اور اس کے گرد نواح میں چوروں اور ڈکیتوں کا راج ہے ایک ہفتے میں چوری اور ڈکیتی کی تقریبا ففٹی مکمل ہو چکی گئی، کراچی جانے والی مسافر کوچ میں میرپورخاص سے سوار ہونے والے چھ مسلح ڈاکو مسافروں سے لاکھوں روپے نقدی، موبائل فونز، طلائی زیورات اور قیمتی سامان لوٹ کر فرار ہو گئے، ایس ایس پی اپنے افسران سے اجلاس اجلاس کھیلنے اور تھانے فروخت کرنے میں مصروف ہیں، سی سی ٹی وی فوٹیج موجود ہونے کے باجود پولیس ملزمان کو گرفتار کرنے میں بری طرح ناکام ہے، شہریوں نے وزیراعلیٰ سندھ سے مطالبہ کیا ہے کہ کرپٹ اور نااہل پولیس افسران کو فوری ہٹا کر شہریوں کو تحفظ فراہم کریں تفصیلات کے مطابق میرپورخاص ان دنوں چوروں کیلئے جنت بنا ہوا ہے شہر اور اس کے گردونواح میں گزشتہ ایک ہفتے میں چوریوں اور ڈکیتیوں کی تقریبا ففٹی مکمل ہو چکی ہے کراچی جانے والی مسافر کوچ نمبر JB.1858 میں چھ مسلح افراد سوار ہوئے اور راستے میں مسافروں سے لاکھوں روپے کی نقدی، 60 موبائل فونز، طلائی زیورات اور قیمتی اشیاء لوٹ کر فرار ہو گئے، ٹاون پولیس اسٹیشن کے قریب تماچی مسجد کے باہر کھڑی غلام حسین مری کی نئی موٹرسائیکل کا لاک توڑ کر نامعلوم چور لے اڑے، سینئر صحافی امجد کاظمی سے سیٹلائیٹ ٹاون تھانے کی حدود میں نامعلوم چور اسلح کے زور پر نقدی چھین کر فرار ہو گئے، طارق نامی شخص سے نامعلوم مسلح ملزمان 85 ہزار روپے اور قیمتی موبائل فونز چھین کر فرار ہو گئے جبکہ گھر کے باہر کھڑی کار کا شیشہ توڑ کر نامعلوم چور قیمتی ساونڈ سسٹم چوری کر کے لے اڑے، گزشتہ روز رات گئے کراچی سے آنے والی مسافر کوچ پولیس لائن کے سامنے رکی اور اس سے پانچ مسافر اترے تو دو مسلح افراد نے ان سے ہزاروں روپے نقدی اور موبائل فونز چھین کر فرار ہو گئے اس حوالے سے شہریوں کا کہنا ہے کہ چوری اور ڈکیتی کی ہونے والی وارداتوں کی سی سی ٹی وی پولیس کو فراہم کرنے کے باوجود پولیس ملزمان کو گرفتار کرنے میں بری طرح ناکام ہے اس حوالے سے زرائع کا کہنا ہے کہ ایس ایس پی اپنے ماتحت افسران سے اجلاس اجلاس کھیل رہے ہیں اور ان اجلاسوں میں تھانوں کی بولیاں لگائی جاتی ہیں اور زیادہ بولی لگانے والے افسر کو ایس ایچ او تعینات کیا جاتا ہے شہریوں نے وزیراعلیٰ سندھ اور آئی جی سندھ سے مطالبہ کیا ہے کہ میرپورخاص سے نااہل اور کرپٹ افسران کو فوری ہٹا کر اہل اور ایماندار پولیس افسران کو تعینات کر کے ملزمان کو گرفتار کر کے شہریوں کی قیمتی اشیاء کو لوٹنے سے بچایا جائے اور شہریوں کو تحفظ فراہم کیا جائے*