گورنر اسٹیٹ بینک کی ممکنہ دوڑ میں بینک آف پنجاب کے صدر ظفر مسعود کا اسپانسر کون ؟ کیا حالیہ امریکی لابنگ اسی سلسلے کی کڑی ہے ؟

گورنر اسٹیٹ بینک کی ممکنہ دوڑ میں بینک آف پنجاب کے صدر ظفر مسعود کا اسپانسر کون ؟ کیا حالیہ امریکی لابنگ اسی سلسلے کی کڑی ہے ؟
شہباز حکومت پر تنقید کی جا رہی ہے کہ گورنر اسٹیٹ بینک کی تقریری میں وقت ضائع کیا گیا اور مستقل گورنر مقرر نہ کر کے قائم مقام کے ذریعے کچھ خاص مقاصد حاصل کیے گئے لیکن اس کے


منفی اثرات معیشت پر مرتب ہوئے اور ڈالر قابو سے باہر ہوگیا ۔ ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر کو مستحکم رکھنے اور دیگر مارکیٹ پلیئرز کو ریگولیٹ کرنے میں گورنر اسٹیٹ بینک کا اہم کردار ہوتا ہے بہرحال جو وقت ضائع ہونا تھا وہ ہو چکا

اور اس کے جو منفی اور مثبت فوائد اور نقصانات سامنے آنے تھے وہ بھی آچکے ۔ ڈالر اور روپے کی قدر کے کھیل میں جس نے پیسہ بنانا تھا وہ بنا چکا ۔


اب اطلاعات آ رہی ہیں کہ نئے گورنر اسٹیٹ بینک کے لئے حکومت جلد فیصلہ کرنے والی ہے مختلف نام زیر بحث ہیں لیکن

بینک آف پنجاب کے صدر ظفر مسعود کا نام اچانک اس فہرست میں مضبوط امیدوار کے طور پر سامنے آیا ہے چرچا ہے کہ ان کی حالیہ


امریکن لابنگ اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے مختلف ملکی اور غیر ملکی اخبارات جریدوں اور بینکنگ سرکل میں ان کو ایک دم پاکستان کا شائننگ بینکنگ ا سٹار دکھانا شروع کر دیاگیا ۔ یہ سب کچھ ایسے موقعے پر ہوا جب

ایک طرف ایک مشہور پاکستانی عارف نقوی کی بدنامی کی کہانیاں عالمی سطح پر توجہ حاصل کر رہی ہیں تو دوسری طرف بینک آف پنجاب کے صدر کی حیثیت سے ظفر مسعود کی امیج میںکنگ کا سلسلہ تیزی سے


جاری ہے سوال اٹھایا جا رہا ہے کہ کیا یہ محض ایک اتفاق ہے یا پلاننگ ؟
پاکستان کے فضائی حادثے میں معجزانہ طور پر زندہ بچ جانے والے ظفر مسعود کے بارے میں بحث ہو رہی ہے کہ کیا وہ اسٹیٹ بینک گورنر کی دوڑ بھی جیتنے والے ہیں ؟

===============================