لاڑکانہ چانڈکا میڈیکل کالیج کی طالبہ نوشین کاظمی کی حلاکت کا معاملہ لاڑکانہ نوشین کاظمی کی متضاد حتمی پوسٹ مارٹم رپورٹ جاری کر دی گئی

لاڑکانہ چانڈکا میڈیکل کالیج کی طالبہ نوشین کاظمی کی حلاکت کا معاملہ

لاڑکانہ نوشین کاظمی کی متضاد حتمی پوسٹ مارٹم رپورٹ جاری کر دی گئی


لاڑکانہ میڈیکو لیگل افسر ڈاکٹر رخسار سموں نے 24 مئی کو نوشین کاظمی کی متضاد حتمی پوسٹ مارٹم رپورٹ جاری کی

لاڑکانہ نوشین کاظمی کی حتمی پوسٹ مارٹم رپورٹ کراچی یونیورسٹی کی فارنسک لیب سے حتمی ڈی این اے رپورٹ جاری ہونے کے بعد دی جانی تھی ذرائع

لاڑکانہ ایم ایل او ڈاکٹر رخسار سموں پر مبینہ دبائو ڈال کر حتمی پوسٹ مارٹم رپورٹ جاری کروائی گئی ذرائع

لاڑکانہ نوشین کاظمی کی لمس ڈی این اے رپورٹ میں مرد کے شواہد ملے تھے جبکہ چانڈکا سول اسپتال لیبارٹری کی رپورٹ میں کوئی مردانہ اجزاء کے شواہد نہیں ملے تھے۔


لاڑکانہ جوڈیشل انکوائری کے جج نے نوشین کاظمی رپورٹ تیسری لیبارٹری سے کروانے کے احکامات دیئے تھے ذرائع

لاڑکانہ جوڈیشل انکوائری جج کے تبادلے کے بعد ایم ایل او پر مبینہ دبائو ڈال کر بغیر ڈی این اے رپورٹ کے حتمی پوسٹ مارٹم رپورٹ جاری کروائی گئی ذرائع

لاڑکانہ نوشین کاظمی حتمی پوسٹ مارٹم رپورٹ میں ایم ایل او نے دونوں لیب رپورٹس کا ڈکر کیا جبکہ یہ بھی لکھا کہ ابھی ایک رپورٹ آنا باقی ہے ذرائع


لاڑکانہ ایس ایس پی لاڑکانہ سرفراز نواز شیخ کا متعلقہ معاملے پر معقف دینے سے گریز

لاڑکانہ پولیس کی جانب سے نوشین کاظمی کی حتمی پوسٹ مارٹم رپورٹ میڈیا کو جاری کرنے سے گریز

لاڑکانہ کراچی یونیورسٹی فارنسک لیب کی حتمی ڈی این اے رپورٹ بھی ڈھائی ماہ گزر جانے کے باوجود منظر عام سے غائب ہے۔
=====================================