جی ڈی اے کی جانب سے کرپشن میں ملوث ڈپٹی کمشنر و ڈی آر او پر سخت تحفظات کا اظہار کیا گیا ہے، ڈی آر او پیپلز پارٹی کے ایم این ایز و ایم پی ایز کی کمداری کر رہے ہیں، نتائج میں ردوبدل کرنے کی تیاریاں ہیں، مخالفین کے خلاف انتقامی کاروائیاں کی جا رہی ہیں

میرپورخاص == تحسین احمد خان === جی ڈی اے کی جانب سے کرپشن میں ملوث ڈپٹی کمشنر و ڈی آر او پر سخت تحفظات کا اظہار کیا گیا ہے، ڈی آر او پیپلز پارٹی کے ایم این ایز و ایم پی ایز کی کمداری کر رہے ہیں، نتائج میں ردوبدل کرنے کی تیاریاں ہیں، مخالفین کے خلاف انتقامی کاروائیاں کی جا رہی ہیں، مخالف امیدواروں کے تائید کنندہ اور تجویز کنندہ کو پولیس اغوا کر کے غائب کررہی ہے تعلقہ سندھڑی سمیت ضلع بھر میں پولنگ والے روز جھگڑوں کا خطرہ ہے اس لئے تمام یوسیز اور وارڈوں کے پولنگ اسٹیشنوں پر رینجر تعینات کی جائے اگر کوئی جھگڑا ہوا تو ایف آئی ڈی آر او پر درج کرائی جائے گیاس ضمن میں گرینڈ ڈیمو کریٹک الائنس میرپورخاص کے رہنماء سرفراز علی جونیجو، مسلم لیگ فنکشنل کے ضلعی صدر فقیر مبارک مہر، تعلقہ سندھڑی کی یونین کونسل 6 ڈھاراڑو سے بنا مقابلے کامیاب ہونے والے ضلع کونسل کے ممبر جاوید جونیجو نے جونیجو ہاؤس میں ایک پر ہجوم پریس کانفرنس سے


خطاب کرتے ہوئے کہی انھوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کی حکومت نے بلدیاتی انتخابات سے قبل ہی انتخابات میں دھاندلی کرنے کی تیاری کر لی ہے اور کرپشن میں ملوث افسر کو ڈی آر او مقرر کیا گیا ہے جی ڈی اے کو میرپورخاص ضلع کے کرپشن میں ملوث ڈپٹی کمشنر و ڈسٹرکٹ ریٹر ننگ آفیسر سلامت علی میمن پر شدید تحفظات ہیں ان کی موجودگی میں صاف اور شفاف بلدیاتی الیکشن کا انعقاد ناممکن ہے ڈی آر اوضلع بھر میں پیپلز پارٹی کے ایم این ایز اور ایم پی ایز کی کمداری اور ان کے اور پیپلز پارٹی کے مفادات کے لئے کام کر رہے ہیں انتخابی حلقوں کی حد بندیاں بنگلوں میں بیٹھ کر کی گئی ہیں جبکہ اپنی مرضی سے پولنگ اسٹیشن قائم کئے گئے ہیں جن علاقوں میں گزشتہ کئی سالوں سے پولنگ اسٹیشن قائم تھے انھیں تبدیل کر کے ایسے علاقوں میں قائم کئے گئے ہیں جہاں ان کی اکثیریت ہے جبکہ دور دراز کے علاقوں سے آنے والے مخالف ووٹروں کے لئے کوئی راستہ اور سہولیات نہیں ہے جس کی وجہ سے ان علاقوں میں جھگڑوں کا قوی امکان ہے اور یہ انتخابات میں دھاندلی کا ثبوت ہے انھوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے امیدوار مخالف امیدواروں کو حراساں اور دھمکیاں دے رہے ہیں جس میں پولیس بھی ملوث ہے گزشتہ روز سندھڑی کے ہنگورنو ون کے امیدوار کے تائید کنندہ نیاز شر کو پولیس بلا وجہ اغوا کر کے لے گئے


اس طرح کے ضلع کے دیگر علاقوں میں بھی واقعات رو نما ء ہو رہے ہیں جبکہ سندھڑی کی یونین کونسل ڈھاراڑو سے پیپلز پارٹی کے امید وار کی عمر کم ہونے کے باعث آر او نے ان کے کاغذات نامذدگی مسترد کر دیئے تھے اور جاوید جونیجو بلامقابلہ ضلع کونسل کے ممبر کامیاب قرار پائے تھے لیکن سیاسی دباؤ کے باعث آر او نے مسترد کئے گئے فارم کو معلوم نہیں کون سے قانون کے تحت دوبارہ بحال کر دیئے ہیں جس کے خلاف ہم نے کورٹ سے رجوع کیا ہوا ہے انھوں نے کہا کہ میرپورخاص کا دیہی علاقہ کے لوگوں کا دارومدار زراعت پر ہے اور ان علاقوں میں پیپلز پارٹی کے مخالفین کی شاخیں، واٹر کورسوں کو بند کر کے مخالفین کو مالی نقصان پہنچایا جا رہا ہے اور انھیں پیپلز پارٹی کے امیدوار کی حمایت کے لئے مجبور کیاجا رہا ہے جبکہ حکمران جماعت کی جانب سے عوامی حمایت حاصل کرنے کے لئے سیاسی رشوت کے طور پر ترقیاتی کام کرائے جا رہے ہیں جو کہ الیکشن قوانین کی کھلی خلاف ورزی ہے انھوں نے کہا کہ کہا جا رہا ہے الیکشن کے نتائج چار روز بعد دیئے جائیں گے جس پر ہمیں سخت اعتراض ہے نتائج فوری طور پر کیوں نہیں دیئے جا سکتے حکمراں جماعت کی یہ سازش ہے کہ نتائج تبدیل کر کے اپنے امیدواروں کو کامیاب کرا یا جائے اور ڈی آر او کی جانب داری سے یہ معاملہ اور بھی مشکوک ہو گیا ہے ہم نے ڈی آر او کی جانب داری اور حکمران جماعت کی کمداری کرنے اور مخالفین کے خلاف انتقامی کاروائیاں کرنے کے حوالے سے الیکش کمیشن آف پاکستان کو بھی درخواست دی ہے اگر جھگڑے اور نقصان ہو تا ہے تو اس کی ایف آئی آر ڈی آر او کے خلاف در ج کرائی جائے گی اس لئے ہمارا


مطالبہ ہے کہ جھگڑوں اور دھندلی کے روک تھام کے لئے ضلع بھر کی یونین کونسلوں اور وارڈوں کے پولنگ اسٹیشنوں پر رینجر ز تعینات کی جائے، متنازعہ ڈی آر او کو فوری طور پر ہٹا کر کسی ایماندار اور غیر جانبدار ڈی آر او کو مقرر کیا جائے بصورت دیگر ڈی آر او آفس کے سامنے احتجاج اور دھرنا دیا جائے گا الیکشن کے نتائج فوری طور پر جا ری کئے جائیں اس موقع پر فنکشل لیگی رہنماء حاجی رحیم بخش راجڑ، محمد اقبال اور دیگر بھی موجود تھے ٭٭
================================