میرپورخاص سے کئی اہم خبریں۔

میرپورخاص == تحسین احمد خان === لیاقت یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر اکرام دین اجن نے کہا ہے کہ ڈاکٹری ایک مقدس پیشہ ہے جن طلبہ و طالبات نے ڈاکٹر کی ڈگری حاصل کی ہے دکھی انسانیت کی خدمت کرنا ان پر فرض ہو گیا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے محمد میڈیکل اینڈ ڈینٹل کالج کے تیسرے کانووکیشن 2022 سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر محمد میڈیکل کالج کے منیجنگ ٹرسٹی و پرنسپل پروفیسر ڈاکٹر سید رضی محمد نے کہا کہ درسگاہوں کو مادر علمی کا درجہ حاصل ہے اور ماں کے پیار کا دنیا میں نعمل البدل نہیں انہوں نے کہا کہ محمد میڈیکل کالج سے تعلیم حاصل کرنے ولے طلبہ وطالبات نہ صرف ملک بلکہ بیرون ممالک میں بھی خدمات انجام دے رہے ہیں اور یہاں سے تعلیم حاصل کرنے والے


طلبہ کا معیار کسی بھی دنیا کے بڑے تعلیمی ادارے سے کم نہیں ہے انہوں نے کہا ہمیں فخر ہے کہ سندھ کے پسماندہ علاقے میرپورخاص میں چوتھائی صدی قبل محمد میڈیکل کالج قائم ہوا جہا ں تمام داخلے میرٹ کی بنیاد پر دیئے جاتے ہیں اور طلبہ و طالبات کو بڑی محنت سے تعلیم دی جاتی ہے تاکہ وہ اپنے علاقے، شہر اور ملک کے عوام کو صحت کی سہولیات فراہم کر سکیں اور یہاں طلبہ کو نہ صرف طب کی معیاری تعلیم دی جاتی ہے بلکہ ان کو زندگی کے ہر شعبہ میں کامیابی کے گر بھی سکھائے جاتے ہیں تاکہ وہ یہاں سے فارغ التحصیل ہو کر نہ صرف اپنے خاندان بلکہ ملک کی بہتر خدمت کرسکیں، کانووکیشن سے وائس پرنسپل پروفیسر شمس العارفین خان، پروفیسر حبیب الرحمن چوہان، پروفیسر فرزانہ چانگ، پروفیسر اعجاز میمن نے بھی خطاب کیا، کانووکیشن میں، ایڈیشنل کمشنر ڈاکٹر علی نواز بھوت، ناظم امتحانات لیاقت یونیورسٹی فتح محمد عباسی، فیکلٹی، ڈگریاں حاصل کرنے والے ڈاکٹرز اور ان کے والدین، صحافیوں، اور مہمانوں کی بڑی تعداد میں شرکت کی، کانووکیشن میں سال 2020-21 میں کامیاب ڈاکٹرز کو ڈگری، گولڈ میڈل، ایورڈ تقسیم کر کے حلف اٹھوایا گیا، مقررین نے مذید کہا کہ میرپورخاص کا شمار ملک کے بڑے شہروں میں ہونے لگا ہے اس لئے اب یہاں بڑے تعلیمی اداروں اور یونیورسٹیوں کی شدت سے کمی محسوس ہو رہی ہے اس علاقے میں بہت ٹیلنٹ ہے میرپورخاص، عمرکوٹ، تھرپارکر اور سانگھڑ کے اضلاع میں بہت ٹیلنٹ ہے برطانیہ کا ایک ادارہ اس پر ریسرچ بھی کر رہا ہے انھوں نے کہا کہ ڈبلیو ایچ او کے


مطابق پاکستان میں ڈھائی ہزار افراد کو ایک ڈاکٹر کی سہولت میسر ہے جس کی بڑی وجہ ڈاکٹروں کی کمی ہونا ہے اس لئے مذید میڈیکل یونیورسٹیوں کا قائم ہونا ضروری ہے انھوں نے مذید کہا کہ میڈیکل کی تعلیم کیلئے بہتر نظام ہونا انتہائی ضروری ہے تا کہ داخلوں میں آسانی پیدا ہو وائس چانسلر نے کہا ایم ایم سی جیسا معیاری تعلیمی ادرہ میں نے نہیں دیکھاجہاں عمدہ نصاب کے ساتھ ساتھ اخلاقی اقدار کی بھی مکمل تربیت کی جاتی ہے انہوں نے کہا کہ ہم نے نئے کورس متعارف کروائے ہیں جن میں چار سال کا فرانزک کورس، سٹی اسکن اور ایم آر آئی شامل ہیں تاکہ جن امیدوارو کو میڈیکل میں داخلہ نہیں ملتا وہ ان کورسوں کو مکمل کر کے اس پیشے سے منسلک ہو کر روزگار حاصل کر سکتے ہیں اس کے علاوہ مڈ وائف کورس بھی شروع کیا جا رہا ہے اس موقع پر ایم بی بی ایس کے کامیاب طلبہ وطالبات کیلئے خصوصی پروگرام ترتیب دیئے جن میں عشائیہ، محفل موسیقی کے ساتھ ساتھ کھیلوں کے مقابلوں کا بھی انعقاد کیا گیا٭٭

میرپورخاص تحسین احمد خان ===) شہید ذوالفقار علی بھٹو اسپورٹس کمپلیکس کرکٹ اسٹیڈیم میں میرپورخاص پریس کلب کے زیراہتمام کھیلے جانے والے شہید محمود سلطان چانڈیو ٹی10لیگ کرکٹ چیمپیئن شپ میں مزید دو میچوں کے فیصلے ہوگئے،پہلے میچ میں شہید محمود سلطان الیون نے شاھ اینڈ خان تھنڈرز کو 43رنز سے ہرایا پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے شہید محمود سلطان کی ٹیم نے 114رنز بنائے بہرام خان نے 41اور زاہد حسین نے 23رنز اسکورکئے جوابی بیٹنگ کرتے ہوئے شاھ اینڈ خان تھنڈر کی ٹیم 71رنز بناسکی محمد وسیم نے 20رنز بنائے شہید محمود سلطان کے زاہد حسین نے 3جبکہ صابر علی اور سلما ن آرائیں نے 2,2وکٹیں حاصل کیں دوسرے میچ میں ینگ الیون ٹائیگرز کی ٹیم نے سنسی خیز مقابلے کے بعد بلند لائنز کی ٹیم کو 8رنز سے ہرایا پہلے


بیٹنگ کرتے ہوئے ینگ الیون کی ٹیم نے 149رنز بنائے احتشام کاکا نے شاندار بیٹنگ کرتے ہوئے ٹورنامنٹ میں اپنی دوسری نصف سینچری بنائی انہوں نے 10چھکوں کی مدد سے 72رنز کی برق رفتار اننگ کھیلی جبکہ انیس گدی نے 29رنز بنائے جوابی بیٹنگ کرتے ہوئے بلند لائنز کی ٹیم 141کی رنز بناسکی محمد صدام 55،ریحان نظام 43رنز بناسکے ینگ الیون کے رحمت کلہوڑو نے 2وکٹیں حاصل کیں قبل ازیں میچوں میں آنے والے مہمان خصوصی ڈائریکٹر انفارمیشن حیدرآباد سوائی خان چھلگری، صدر پریس کلب نذیر پہنور،تحریک انصاف کے ضلعی صدر آفتاب حسین قریشی،پی ایس ایف کے صوبائی نائب صدر دریا خان مری،سی ای او آصفہ بھٹو زرداری فٹبال اکیڈمی ماجد جان لاشاری کا تعارف کھلاڑیوں سے کرایا گیا بعد ازاں مہمانوں نے مین آف دی میچ قرار پانے والے کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کئے جبکہ مہمانوں کو اجرک اور شیلڈز کے تحائف بھی پیش کئے گئے کھیلے جانے والے میچوں میں عبد الصمد،اسلم قریشی اور محمد عدنان نے امپائرنگ جبکہ ہوش محمد نے اسکورنگ کے فرائض انجام دیئے اس موقع پر شائقین کرکٹ کی بڑی تعداد موجود تھی٭٭

میرپورخاص == تحسین احمد خان === میرپورخاص کے انتخابی حلقے میر شیر محمد خان ٹالپر کی یونین کمیٹی نمبر8 سے پیپلز پارٹی کے نامز امیدوار برائے چیئرمین حاجی محمد علی نے اپنی الیکشن مہم کا باقاعدہ طور پر آغاز کر دیا، وارڈ نمبر 3کے کونسلر کے الیکشن آفس کا افتتاح کیا گیا تفصیلات کے مطابق میر شیر محمد خان ٹالپر کی یونین کمیٹی 3سے پیپلز پارٹی کے چیئرمین شپ کے امیدوار حاجی محمد علی نے اپنے مرکزی الیکشن آفس سے ڈھول کی تھاپ اور شہنائی کی دھنوں کے ساتھ ایک بڑی ریلی نکالی جس میں پیپلز پارٹی سٹی کے صدر حنیف میمن،شاھ بخش لونڈ کے علاوہ علاوہ بڑی تعداد میں جیالوں اور علاقہ مکینوں نے شرکت کی ریلی کے شرکاء اور علاقہ مکینوں نے حاجی محمد علی کا شاندار استقبال کیا اور انہیں جگہ جگہ پر پھولوں کے ہار پہنائے اور پھولوں کی پتیاں نچھاور کیں اس موقع پر حاجی محمد علی کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت نے مجھ پر جو اعتماد کیا ہے میں اسے پورا کرنے کی کوشش کروں گا اور انتخابات میں کامیابی حاصل کرکے اپنے حلقے کی عوام کے بے لوث خد مت کروں گا بعد ازاں حاجی محمد علی نے اپنے حلقے سے وارڈ نمبر 3کے امیدوار برائے جنرل کونسلر محمد ظہیرخان کے الیکشن آفس کا افتتاح کیا جسکے بعد انہوں نے وارڈ نمبر 3کے مختلف علاقوں میں مختلف برادریوں کے بزرگوں نوجوانوں سے بھی ملاقاتیں کیں اس موقع پر مختلف برادریوں نے حاجی محمد علی کو اپنے بھرپور تعاون کی یقین دہانی کرائی٭٭

میرپوخاص == تحسین احمد خان === گھر میں لگی آگ سے پانچ لاکھ روپے نقدی اور لاکھوں روپے مالیت کا گھریلو سامان جل کر خاکستر ہو گیا، فائر برگیڈ کو بروقت اطلاع کے باوجود تاخیر سے پہنچی، مالک مکان کے مطابق آگ شارٹ سرکٹ سے لگی تفصیلات کے مطابق میرپورخاص کے علاقے والکرٹ ٹاون کے رہائشی انیس رائے کے گھر کی پہلی منزل میں آگ لگ گئی جس کی بروقت اطلاع فائر برگیڈ کو دی گئی لیکن فائر برگیڈ تاخیر سے پہنچنے کی وجہ سے فریج، الماریاں، اے سی، اوون، سمیت گھر میں موجود گھریلو سامان جل کر خاکستر ہو گیا جبکہ گھر میں رکھے ہوئے پانچ لاکھ کی نقد رقم بھی جل گئی گھر کے مالک انیس رائے نے بتایا کہ گھر میں آگ یو پی ایس سے شارٹ سرکٹ سے لگی انیس رائے نے بتایا کہ آگ لگنے کی اطلاع بروقت فائر برگیڈ کو دی تھی لیکن فائر برگیڈ کی گاڑی تاخیر سے پہنچی اگر فائر برگیڈ کی گاڑی بروقت پہنچ جاتی تو اتنا زیادہ نقصان نہ ہوتا٭٭
========================