شعیب اختر کا سچن ٹنڈولکر کو زخمی کرنے کے پلان کا اعتراف

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق فاسٹ بولر شعیب اختر نے کراچی میں کھیلے گئے 2006 کے ٹیسٹ میچ میں سچن ٹنڈولکر کو زخمی کرنے کے پلان کا اعتراف کرلیا۔

ایک بیان میں شعیب اختر نے کہا کہ میں کراچی ٹیسٹ میں سچن ٹنڈولکر کو زخمی کرنا چاہتا تھا، میں نے اپنے کپتان انضمام الحق کو کہا کہ سچن کو زخمی کرنا چاہتا ہوں۔

ان کا کہنا تھا کہ میں نے جب سچن ٹنڈولکر کو ہیلمٹ پر گیند ماری تو مجھے لگا کہ وہ جان سے گئے، 2 بار انہیں زخمی کرنے کی کوشش کی تھی۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ محمد آصف کے سامنے راہول ڈریوڈ کو کھیلنے میں مشکل پیش آتی تھی، وہ ایک جادوگر فاسٹ بولر تھے، ان کے سامنے خود کو میں ایک معمولی بولر سمجھتا تھا۔

شعیب اختر کا کہنا تھا کہ2006 میں کھیلے گئے کراچی ٹیسٹ میں ساتھی کھلاڑیوں کو محمد آصف نے وی وی ایس لکشمن کو آؤٹ کرنے کا بتایا تھا، انہوں نے جیسا کہا ویسے ہی انہیں آؤٹ کر کے دکھایا۔

قومی ٹیم کے سابق کھلاڑی نے کہا کہ محمد آصف نے ایک طرح کی ڈیلیوری سے دونوں اننگز میں وی وی ایس لکشمن کو آؤٹ کیا تھا، بہت دکھ ہوا جب محمد آصف نے خود کو میچ فکسنگ میں پھنسا کر تباہ کردیا، فاسٹ بولنگ میں ان کا معیار وسیم اکرم جتنا تھا۔