رمضان بی بی نے پرنسپل نرسنگ کالج جنرل ہسپتال کا چارج سنبھال لیا

میڈیکل کے شعبے سے وابستہ ہر شخص کو بغیر کسی طمع کے فرائض منصبی ادا کرنا چاہئے
اساتذہ نرسنگ طالبات کی تعلیم و تربیت کیلئے تمام توانائیاں بروئے کار لائیں:پروفیسر الفرید ظفر
لاہور30مئی:…… رمضان بی بی نے پرنسپل نرسنگ کالج لاہور جنرل ہسپتال کے عہدے کا چارج سنبھال کر اپنی ذمہ داریاں ادا کرنا شروع کر دی ہیں، آج اُن کے پہلے روز نرسنگ کالج کی فیکلٹی ممبران نے اُن کا پرتپاک استقبال اور انہیں ادارے میں خوش آمدید کہتے ہوئے اُن کے لئے نیک تمناوؤں کا اظہار کیا۔ پرنسپل پوسٹ گریجویٹ میڈیکل انسٹی ٹیوٹ پروفیسر الفرید ظفر نے اس حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے اساتذہ کو ہدایت کی کہ


نرسنگ طالبات کی تعلیم و تربیت کے لئے تمام تر توانائیاں بروئے کار لائی جائیں اور نرسنگ سٹوڈنٹس کو میڈیکل فیلڈ کے جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کرنے کے لئے کوئی دقیقہ فروگزاشت نہ کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ جدت اور سائنسی ایجادات سے مزئین موجودہ دنیا گلوبل ویلج بن چکی ہے اور دیگر شعبوں کی طرح میڈیکل سے وابستہ بالخصوص نرسنگ سیکٹر کا تقاضا ہے کہ انہیں مریض کی دیکھ بھال، وارڈز کو اپ ڈیٹ رکھنے اور دیگر امور کے بارے میں ہر طرح کی تعلیم فراہم کی جائے تاکہ انہیں نرسنگ کے عملی شعبے میں اس ایجوکیشن کو بروئے کار لانے کا موقع مل سکے۔


اس موقع پر رمضان بی بی نے نرسنگ انسٹرکٹر و طالبات سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ طب سے وابستہ افراد کو بغیر کسی طمع اور لالچ کے اپنے فرائض منصبی انجام دینا چاہئیں کیونکہ تنخواہ و دیگر مراعات کے علاوہ اس خدمت کا اصل صلہ اللہ تعالیٰ کے ہاں ملتا ہے کیونکہ ہم دکھی انسانیت کی خدمت کے لئے اپنی توانائیاں وقف کرتے ہیں۔ رمضا ن بی بی کا مزیدکہنا تھا کہ نرسنگ کی درس و تدریس میں بلا شبہ انسٹرکٹر زنمایاں کردار ادا کرتی ہیں لہذا ان کی اولین ذمہ داری ہے کہ وہ میڈیکل کاشعبہ اختیار کرنے والی نئی طالبات کو تعلیم کے ساتھ ساتھ ادارے کے نظم و ضبط اور مریضوں کی نگہداشت کے بارے میں مناسب رہنمائی بھی فراہم کریں اور کلاس کے دوران اپنی تمام ترتوجہ تعلیم اور اس سے منسلک امور پر مرکوز کریں۔


اس موقع پر شہناز ڈار، کوثر پروین، عذراپروین،ثوبیہ لطیف، عابدہ و دیگر نرسنگ انسٹرکٹرز نے رمضان بی بی کو اپنے ہر ممکن تعاون کا یقین دلاتے ہوئے اُن کی تعیناتی پر مسرت کا اظہار کیا اور توقع ظاہر کی کہ انشا اللہ آنے والے دنوں میں یہ نرسنگ کالج مزید بہتری سامنے لائے گا جس سے نرسنگ کے شعبے کو مضبوط کرنے میں مدد ملے گی۔
٭٭٭٭٭
==================================


مانکی پاکس کے خدشے کے پیش نظر پنجاب بھر سے طبی عملے کی تربیت شروع ہوگئی۔ پہلا تربیتی سیشن پیر کے روز یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز میں ہوا جس میں لاہور، ملتان، راولپنڈی اور سیالکوٹ کے سرکاری ہسپتالوں سے منتخب طبی عملے کو بیماری کی تشخیص، مریضوں کی مینجمنٹ اور علاج کے حوالے سے بتایا گیا۔ ڈی جی ہیلتھ پنجاب آفس کے زیر اہتمام یہ تربیتی سیشن ہر پیر کے روز یو ایچ ایس میں ہوا کریں گے اور پنجاب کے ہر ہسپتال سے ایک ڈاکٹر، نرس اور پیرامیڈکس کی تربیت کی جائے گی۔ اس موقع پر یو ایچ ایس مائیکرو بیالوجی ڈیپارٹمنٹ کی سربراہ پروفیسر سدرہ سلیم نے مانکی پاکس کے بارے میں بریفنگ دی۔ تربیتی سیشن میں کے ای ایم یو شعبہ میڈیسن سے ڈاکٹر صومیہ اقتدار اور شعبہ ڈرماٹالوجی سے ڈاکٹر شہلا نے بطور سہولت کار شرکت کی۔ شرکاء سے اپنے خطاب میں وائس چانسلر یو ایچ ایس پروفیسرجاوید اکرم نے کہا کہ ابھی تک مانکی پاکس کا کوئی کیس رپورٹ نہیں ہوا تاہم طبی عملے کو کورونا کی طرح مانکی پاکس کے خطرے سے نمنٹنے کیلئے تیار رہنا چاہئے۔ انھوں نے کہا کہ طبی عملے کو ابتدائی تربیت دے رہے ہیں۔ ضرورت پڑی تو مزید ایڈوانسڈ ٹریننگ بھی کریں گے۔ پروفیسر سدرہ سلیم نے بتایا کہ مانکی پاکس کسی متاثرہ شخص کے جسمانی سیال ، تنفس اور چھونے سے پھیل سکتا ہے۔ اس کی علامتوں میں بخار، جسم پر آبلے، سوجن، پٹھوں اور سر میں شدید درد شامل ہیں۔ مریض کو ٹھنڈ، تھکن محسوس ہوتی ہے۔ پروفیسر سدرہ سلیم کا مزید کہنا تھا کہ دس میں سے ایک مریض کیلئے مانکی پاکس خطرناک ثابت ہوسکتا ہے۔ ضروری ہے کہ مشتبہ کیسز کو قرنطینہ میں رکھا جائے۔
=====================================


لاہور( ) پاکستان سنی تحریک وسطی پنجاب کے جنرل سیکرٹری سردار محمد طاہر ڈوگر نے کہا ہے کہ بھارت مقبوضہ کشمیر کی تحریک آزادی کے رہنماؤں وکارکنوں کو فوری رہا کرئے،حریت رہنما یاسین ملک مقبوضہ کشمیر کی نمایاں آواز ہیں،بھارتی حکومت کے یاسین ملک پر جھوٹے مقدمے کی مذمت کرتے ہیں،بھارت کی عدلیہ سے انصاف کی توقع نہیں ماضی کے تمام فیصلے اس کے گواہ ہیں،کشمیر کے عوام کو کسی طور بھی تنہا نہیں چھوڑینگے ان کی سیاسی اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے،حریت رہنما یاسین ملک کے خلاف بے بنیاد الزامات بھارتی ہتھکنڈہ پرانا ہوچکا،عالمی برادری یاسین ملک کو رہا کرانے کیلئے بھارت پر دباؤ بڑھائے،کشمیر میں بھارتی فوج روزانہ کی بنیاد پر مسلم نسل کشی اور مظالم کررہے ہیں،ان خیالات کا اظہار انہوں نے یاسین ملک کی فوری رہائی کا مطالبہ اور بے بنیاد کیس کی مذمت کرتے ہوئے کیاطاہر ڈوگرنے کہا کہ بھارتی عدلیہ کے فیصلے قانون اور حقائق کی بجائے تعصب پر مبنی ہوتے ہیں،بھارتی حکومت انتہاپسند دہشتگرد ہے جو ہرفیصلہ مرضی کا کرانے کیلئے عدالتوں کا گھیراؤ ججز کو دھونس دھمکیوں ڈراا دھمکا کر فیصلے کراتی ہے، سردار یاسین ملک کو عمر قید کی سزا ظلم اور انصاف کا قتل ہے،بھارتی عدالت نے قانون کے منافی فیصلہ دیا جسے مستر کرتے ہیں،حکومت پاکستان سنے مطالبہ کرتے ہیں سردار یاسین ملک کا مقدمہ عالمی عدلات میں لیجایا جائے،سردار یاسین ملک مقبوضہ کشمیر کے عوام کی آواز ہیں،انہوں نے کشمیر کی آزادی کیلئے جدوجہد کی ہے جو بھارت کو ایک آنکھ نہیں بہا رہی ہے،سردار یاسین ملک کے خلاف فیصلہ کیا آئے گا سب جانتے ہیں،بھارت اوچھے ہتھکنڈے اسعمال کرنے کی بجائے اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل درآمد کرئے،کشمیر کا فیصلہ پر امن اور اقوام متحدہ کی قرارداد کی روح کے مطابق چاتے ہیں،بھارت نے مقبوضہ کشمیر پر غاصبانہ قبضہ کیا ہوا ہے اسے فوری ختم کرئے،سرداریاسین ملک کی سزا پر خاموش نہیں رہینگے کسمیر کی عوام کے ساتھ مل کر ان کی رہائی کیلئے جدوجہد کرینگے۔#
====================================