اسلام آباد میں شرپسند بلوائیوں کےجتھوں نےجوفسادبرپاکیا ھے میں اس کی شدید مذمت کرتا ھوں

آج اسلام آباد میں شرپسند بلوائیوں کےجتھوں نےجوفسادبرپاکیا ھے میں اس کی شدید مذمت کرتا ھوں
پاکستان کی عدالتِ عظمی نے آج ایگزیکٹیو کے امن وامان برقرار رکھنے کی پالیسی کو غیر موثر کردیا جس سےعدالت کی طرف سے PTI کو سہولت کاری دینے کاتاثر پیداھوا۔اب اس پر عدالت کو اپنی پوزیشن واضح کرنی ھوگی


اوراب اس تاثر کو زائل کرنے لیے سپریم کورٹ موثر اقدامات کرے اور PTI قیادت کی طرف سےعدالت عظمی میں کئےگئے وعدوں سے انحراف پر PTI کی قیادت کے خلاف توھینِ عدالت کی کاروائ شروع کرے اور سپریم کورٹ اپنی نگرانی اور اپنی مدعیت میں ان بلوائیوں کے خلاف FIR درج کروائے تاکہ آئین اور قانون کے تقاضے پورے ھوں اور عدالتِ عظمی کی طرف سے PTI کو سہولت دینے کاتاثر زائل ھو


ورنہ پاکستان کی تاریخ کا یہ فساد اور بلوےکا تاریک اور سیاہ باب ھمیشہ سپریم کورٹ کی طرف منسوب رھتے ھوئے اسکے وقار میں کمی کاسبب بنتا رھےگا۔
ٹوئٹر پر بیان جاری کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ پاکستان کی عدالتِ عظمیٰ نے آج ایگزیکٹیو کی امن وامان بر قرار رکھنے کی پالیسی کو غیر مؤثر کردیا، جس سے عدالت کی طرف سے پی ٹی آئی کو سہولت کاری دینے کا تاثر پیدا ہوا تاہم اب اس پر عدالت کو اپنی پوزیشن واضح کرنی ہوگی۔
=======================