شیریں مزاری کے واقعے سے مریم نواز کی گرفتاری کے تلخ حقائق منظر عام پر آگئے ۔ شیریں مزاری اپنی حکومت کے دور میں بھیانک واقعات پر چپ کیوں رہیں ؟ سوشل میڈیا پر بحث میں نئے سوالات سامنے آگئے ۔

شیریں مزاری کے واقعے سے مریم نواز کی گرفتاری کے تلخ حقائق منظر عام پر آگئے ۔ شیریں مزاری اپنی حکومت کے دور میں بھیانک واقعات پر چپ کیوں رہیں ؟ سوشل میڈیا پر بحث میں نئے سوالات سامنے آگئے ۔

=======
شیریں مزاری کو خواتین، مجھے دونوں بار مرد اہلکاروں نے گرفتار کیا، مریم نواز
=======
لاہور(نمائندہ جنگ )پاکستان مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز شریف نے کہا ہے کہ شیریں مزاری کوخواتین ،مجھے دونوں بارمرد اہلکاروں نےگرفتارکیا،جب میری عمر 16سال تھی مجھےبے گناہ مقدمے میں4ماہ اڈیالہ جیل اورڈیتھ سیل میں رکھا گیا،رات کے 12 بجے مرد اہلکار دھاوا بولتے اوروڈیو بناتے تھے،ایک بار کھڑکی سےدیکھا تو نیب افسراندھیرے میں کھڑے تھے ،نیب میں میرے ساتھ جو کچھ کیا گیا وقت آنے


پر سب سامنے لائوں گی ،کہاںکہاں کیمرے لگائے ہوئے ہوئے تھے اورکیا کرتے تھے، میں نے زبان کھولی کہ میرے ساتھ کیا کیا ہوا تو بات بہت دور تک جائے گی ،مزاری کی گرفتاری میں عورت کارڈکا استعمال مناسب نہیں، میں عمران کی بیٹی کی عمر کی ہوں، عمران خان ابھی بھی لاڈلہ ہے ، نواز شریف اس سسٹم کا لاڈلہ نہیںلیکن عوام کا لاڈلہ ضرور ہےجس کویہ بار بار نکالتے ہیں لیکن عوام اسے بار بار لاتے ہیں ، عمران نے آئین کو توڑانہیں بلکہ کچلا اور روندا ہے اگر یہ حرکت نواز شریف ،شہباز شریف اور مریم نواز نے کی ہوتی تو دعوے سے کہتی ہوں


ہماری لاشیں چوکوں میں ٹنگی ہوتیں ۔سوشل میڈیا کےکارکنان سے خطاب کرتے ہوئے مریم نواز نے کہا کہ شہباز شریف کا بزنس کمیونٹی سے خطاب سن کرتازہ ہوا کا جھونکا محسوس ہوا اور اس طرح کی تقریر سننے کے لئے چار سال سے کان ترس گئے ،ہمیں تو یہ عادت ہوا کرتی تھی میں ائیر کنڈیشنڈ اتروا دوں گا ، بیٹی کو پکڑ لو ،ماں کو پکڑ لو،بہن کو پکڑ لو ، اگر میںنے نواز شریف کو تنگ نہ کیا تو تم دیکھنا ،


انتقام انتقام انتقام کے الزامات کے علاوہ چار سال میں کوئی بات نہیں سنی،اسی کا نتیجہ ہے کہ آج پاکستان معاشی طور پر وینٹی لیٹر پر ہے ،چار سال میں پاکستان کے ساتھ جو کیا گیا اس کا خمیازہ پاکستان بھگت رہا ہے ۔ انہوںنے کہا کہ مجھے ٹی وی سے پتہ چلا کہ شیریں مزاری صاحبہ گرفتار ہو گئیں، مجھے خوشی نہیںہوئی ،لیکن ان پر یہ مقدمہ بزدار حکومت میں بنا ، 800کنال کی سرکاری اراضی کوبوگس کمپنی کے نام منتقل کرایا گیا۔
https://e.jang.com.pk/detail/131945
============================================

مریم نواز کیخلاف عمران کا متنازع بیان، مذمت کا سلسلہ جاری
============
کراچی، لاہور، کوئٹہ(نیوز ایجنسیاں)سیاسی و سماجی رہنمائوں اور مختلف طبقہ ہائے فکر سے تعلق رکھنے والے افراد کی جانب سے سابق وزیراعظم عمران خان کے مریم نواز سےمتعلق متنازع بیان کی مذمت کا سلسلہ جاری ہے ، پاکستان پیپلز پارٹی کی نائب صدراور وفاقی وزیر موسمیاتی تبدیلی شیری رحمان نے کہا کہ مریم نواز کے لیے عمران خان کے الفاظ سن کر سر شرم سے جھک گیا، عمران خان نے جتنا


سیاست کو آلودہ کیا ہے کسی نے نہیں کیا۔ پارٹی کا لیڈر خود کارکنان کو بد تہذیبی کا درس دے رہا ہے۔وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ عمران خان کو اس بد تہذیبی کی سونامی کو روکنا ہوگا۔متحدہ قومی مومنٹ پاکستان کے کنوینر ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نےکہاکہ عمران خان کو گفتگو کرتے ہوئے مشرقی روایات کو سامنے رکھنا چاہیے۔ ماں، بہن، بیٹی کسی کی ہو لائقِ عزت و تکریم ہے سیاسی تقاریر میں تہذیب اور اخلاقی اقدار کو ملحوظ خاطر رکھنا سیاسی رہنمائوں کی ذمہ داری ہے، قوم کی مائوں، بہنوں اور بیٹیوں کی خدمات قابل قدر ہیں مائیں بہنیں بیٹیاں ہمارے معاشرے میں سانجھی ہوتی ہیں ،


پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے مرکزی ترجمان و جمعیت علماءاسلام کے رہنماءمولانا حافظ حمداللہ نے کہا ہے کہ عمران نیازی پاکستان کاسب سے بدتمیز بدزبان اوربدتہذیب پارٹی رہنماہے،پی ڈی ایم عمران نیازی کی گندی سوچ،گندی زبان،اور گندی الفاظ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتی ہے۔عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدروصوبائی پارلیمانی لیڈراصغرخان اچکزئی نے کہاہے کہ جب سے عمران نیازی کوسیاست میں واردکیاگیاسیاست سے شائستگی شرافت باہمی رواداری کاجنازہ نکالاگیا مریم نوازسے متعلق ریمارکس قابل مذمت ہے اس طرح نازیباالفاظ کا استعمال ایک گرا ہوا شخص ہی کرسکتاہے
https://e.jang.com.pk/detail/131951
===========================================