پاکستان بزنس سینٹر کویت کے زیر اہتمام پاکستان اکیڈمی فار اسپیشل کڈز جلیب الشیوخ میں دوسرا سالانہ مینگو ڈے

رپورٹ….  طارق اقبال
 
سمر کیمپ میں شریک اسپیشل بچوں کی زرد لباس میں خصوصی شرکت
کمیونٹی کو اسپیشل بچوں کی اکیڈمی کا بھرپور ساتھ دینا چاہئیے،شمشاد احمد خاں تنولی
پاکستان اکیڈمی فار اسپیشل کڈز کویت میں دوسرے سالانہ مینگو ڈے کا اہتمام کیا گیا ،ایونٹ کو پاکستان بزنس سنٹر کویت نے اسپانسر کیا تھا ،حافظ محمد شبیر ڈائریکٹر جنرل پاکستان بزنس سنٹر ناگزیر مصروفیات کے باعث شرکت نہ کر سکے ،کمیونٹی کی ممتاز سماجی و کاروباری شخصیت شمشاد خاں تنولی سینئر رہنماء و کوآرڈینیٹر انصاف ویلفیئر سوسائٹی کویت نے مہمان خصوصی کے طور پر شرکت کی ، کمیونٹی کی ممتاز سماجی و کاروباری شخصیات اظہر بٹ اور سلیم انصاری اعزازی مہمانان کے طور پر شریک ہوئے ،ان کے ہمراہ کویت پاکستان اکیڈمی فار اسپیشل کڈز میں ان دنوں سمر کیمپ جاری ہے،







سمر کیمپ میں شریک تقریباً تمام بچوں اور ان کے والدین نے تقریب میں شرکت کی۔کمسن بچے زرد کپڑوں میں ملبوس والدین کے ہمراہ تقریب میں شریک ہوئے جس سے مینگو ڈے کا خوبصورت تاثر پیدا ہو گیا۔پاکستان اکیڈمی فار اسپیشل کڈز کے ایگزیکٹو محمد عمر نے اپنے اسٹاف کے ہمراہ معزز مہمانان کا والہانہ استقبال کیا ۔مہمانان نے اسپیشل بچوں کے ساتھ بڑا اچھا وقت گذارا اور ان کے ساتھ تصاویر بھی بنوائیں ،تقریب کے مہمان خصوصی شمشاد خاں تنولی نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ انہیں پاکستان اکیڈمی فار اسپیشل کڈز میں مینگو ڈے کے سلسلہ میں منعقدہ تقریب میں شرکت کر کے بڑی خوشی محسوس ہو رہی ہے ،وہ اکڈمی کے ایگزیکٹو محمد عمر اور اسٹاف کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں کہ وہ اسپیشل بچوں کو معاشرے کا حصہ بنانے کیلئے سخت جدوجہد کر رہے ہیں ،انہیں یہ جان کر بڑی خوشگوار حیرت ہوئی کہ وہ بچوں سے کوئی فیس وصول نہیں کر رہے ،وہ پوری کمیونٹی کو مشورہ دیں گے کہ اس نیک کام میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیں ،انہوں نے اکیڈمی کے حوالہ سے سوالات بھی کئے۔ مہمانان اعزازی اظہر بث اور سلیم انصاری نے بھی کہا کہ پاکستانی اسپیشل بچوں کیلئے کویت میں اکیڈمی کا قیام ایک تاریخی کارنامہ ہے ،پاکستانی کمیونٹی کو اس نیک کام میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینا چاہئے۔مہمانان کو پاکستانی ام کی مشہور ورائٹی چونسا کاٹ کر پیش کئے گئے جسے تمام شرکاء نے بڑا پسند کیا اور حافظ محمد شبیر کو خراج تحسین پیش کیا جنہوں نے کویت میں پاکستانی آم کو عام کردیا ہے۔