لانڈھی کیٹل کالونی میں مویشیوں کے فضلے سے 50 میگا واٹ بجلی کے منصوبے کی فزیبلیٹی اور میونسپل ویسٹ سے مزید 50 میگا واٹ بجلی بنانے کے منصوبے کی فزیبلیٹی جلد از جلد تیار کی جائے

وزیر توانائی سندھ امتیاز احمد شیخ کی ہدایات
کراچی :  وزیر توانائی سندھ کے وزیر توانائی امتیاز احمد شیخ کی صدارت میں منعقدہ ایک اجلاس میں آج کیٹل کالونی لانڈھی میں مویشیوں کے فضلے سے 50 میگا واٹ بجلی بنانے کے منصوبے کی فزیبلیٹی تیار کرنے کی منظوری دی گئی۔اس موقع پر بتایا گیا کہ لانڈھی کیٹل کالونی اور مویشی منڈیوں میں ایک اندازے کے مطابق 15 لاکھ کے لگ بھگ مویشی موجود ہیں جن کے فضلے کو بجلی اور گیس بنانے کے لئے استعمال کرنے سے نہ صرف یہ کہ شہر صاف ہوگا بلکہ کیٹل کالونی اور مویشی منڈیوں میں میں بھی صفائی ستھرائی کی صورتحال میں موثر بہتری آۓگی۔

[embedyt]https://www.youtube.com/watch?v=3bgDy9yZWxY[/embedyt]

اجلاس کو بتایا گیا کہ کراچی میں روزانہ پیدا ہونے والے سالڈ ویسٹ سے بھی 50 میگا واٹ بجلی بنانے کے لئے فزیبلیٹی تیاری کے مراحل میں ہے۔ وزیر توانائی سندھ نے کہا کہ مویشیوں کے فضلے اور سالڈ ویسٹ سے توانائی پیدا کرنے کے منصوبے کی فزیبلیٹی کے لئے ایشیائی ترقیاتی بنک نے تعاون کیا ہے اور اس مقصد کے لئے پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ موڈ کے تحت فزیبلیٹی جلد تیار کرکے پیش کی جائے تاکہ اس منصوبے پر کام شروع کیا جاسکے۔انہوں نے کہا کہ محکمہ توانائی سندھ گوبر اور کچرے کو توانائی کے حصول کے لئے کار آمد بنانے کے منصوبوں میں مکمل تعاون فراہم کرے گا۔



اجلاس میں سیکریٹری توانائی سندھ مصدق احمد خان،سندھ سالڈ ویسٹ مینجمنٹ بورڈ کے مینجنگ ڈائریکٹر اے ڈی سنجنانی،اسپیشل سیکریٹری لوکل گورنمنٹ ڈاکٹر نیاز سومرو،محکمہ خزانہ سندھ کے ڈائریکٹر پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ خالد شیخ، ایڈیشنل کمشنر کراچی،محکمہ ترقیات و منصوبہ بندی کے افسران،کراچی میٹرو پولیٹن کارپوریشن کے افسران اور لانڈھی کیٹل کالونی ایسوسی ایشن کے عہدیداران نے شرکت کی اور اپنی تجاویز پیش کیں۔