ٹڈی دل کو کنٹرول کرنے اور نقصانات سے بچنے کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لا رہے ہیں، آبادگار پریشان نہ ہوں حکومت انکے ساتھ کھڑی ہے : سید مراد علی شاہ

نواب شاہ : وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ ٹڈی دل کو آبادی کے طرف جانے سے روکنے کے لئے ہرممکن اقدامات کئے جارہے ہیں محکمہ زراعت کی جانب سے ٹیمیں تشکیل دیکر 24 گھنٹے مانیٹرنگ کی جارہی ہےجبکہ متاثرہ علاقوں میں ایریل اسپرے اور عوام میں آگاہی بیدار کی جارہی ہے انہوں نے یہ بات آج نواب شاہ کے قریب کھڈھر میں فصلوں پر ٹڈی دل کے حملوں سے بچاؤ اور انتظامیہ کی جانب سے کئے گئے حفاظتی اقدامات کا جائزہ لینے کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہی۔اس موقع پر صوبائی وزیر زراعت محمد اسماعیل راہو،کمشنر شہیدبینظیرآباد نثاراحمد میمن،ڈی آئی جی مظہر نواز کے علاوہ محکمہ زراعت کے افسران موجود تھے۔

[embedyt]https://www.youtube.com/watch?v=3bgDy9yZWxY[/embedyt]

اس موقع پر وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے مزید کہا کہ محکمہ زراعت کی جانب سے 19 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں جو ٹڈی دل کی موجودگی کے اطلاع پر پہنچ کر اسپرے ودیگر انتظامات کررہی ہے تاکہ اس کو مزید پھیلنے سے روکا جاسکے انہوں نے مزید کہا کہ شہید ذوالفقارعلی بھٹو کے دور میں ٹڈی دل کا فصلوں پرحملہ ہوا تھا جس کے بعد انہوں نے آبادگاروں کی رہنمائی اور فصلوں کو بچاؤ کے ساتھ ساتھ اسپرے کے لئے 17 جہاز خریدے تھے جو اب وفاقی حکومت کے پاس ہیں جن میں سے صرف 6 جہاز موجود ہیں ان میں سے وفاق کی جانب سے 1 جہاز اسپرے کے لئے ملا تھا مگر وہ بھی خراب ہونے کے باعث واپس چلا گیا تھا۔



آج بتایا گیا ہے کہ کل سے 2 جہاز ٹڈی دل کے موجودگی والے علائقے میں اسپرے کے لئے مل جائیں گےجس سے ایریل اسپرے کرکے ٹڈی دل کو آبادی والے علاقوں میں آنے سے روکنے میں مدد ملے گی ۔وزیراعلیٰ سندھ نے مزید کہا کہ اس وقت ٹڈی دل کی تعداد اتنی زیادہ نہیں ہےاور نہ ہی فصلوں کے لئے زیادہ نقصانکار ہے انہوں نے مزید کہا کہ آبادی والے علاقوں میں اس وقت ایریل اسپرے کیا جائے جب اس کی ضرورت ہے تاکہ اس کے مضراثرات آبادی میں نہ پڑیں۔



قبل ازیں وزیراعلیٰ سندھ کی آمد پر کمشنر شہیدبینظیرآباد ڈویژن نثاراحمد میمن نے نواب شاہ ائیرپورٹ پر بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ شہیدبینظیرآباد میں ٹڈی دل جامشورو اور دادو سے داخل ہوتے ہیں جو کہ فصلوں کے لئے اتنے نقصان دہ نہیں ہے کیونکہ ہم نے بروقت حفاظتی اقدامات کئے ہیں اور بروقت ان سے بچاؤ کے لئے ہنگامی بنیادوں پر کام کیا جارہا ہے ۔انہوں نے مزید بتایا کہ محکمہ زراعت کی جانب سے ادویات کا اسپرے بھی کیا جارہا ہے جبکہ کاشتکاروں میں آگاہی کے لئے مہم بھی تیزی سے جاری ہے۔کمشنر نے مزید بتایا کہ شہیدبینظیرآباد ڈویژن کی ایریا کو کافی کلئیر کردیا ہے اور ابھی تک فصلوں کو کوئی بڑا نقصان نہیں ہوا ہے۔انہوں نے مزید بتایا کہ عوام میں آگاہی بیدار کرنے کے لئے پمفلٹ تقسیم کرنے کے علاوہ ڈویژن اور ضلع سطح پر کنٹرول روم قائم کرکے محکمہ ریونیو وزراعت کے افسران کو مقرر کیا گیا ہے ۔