سندھ ہائی کورٹ نے سابق وزیر داخلہ سندھ سہیل انور سیال کو گرفتار کرنے سے روک دیا

سندھ ہائی کورٹ نے نیب کو حکم دیا ہے کہ سابق وزیر داخلہ سہیل انور سیال کو گرفتار نہ کیا جائے ۔عدالت نے سابق وزیرداخلہ کی عبوری ضمانت منظور کر لی اور انہیں دس لاکھ روپے کے مچلکے جمع کرانے کا حکم دیا اور نیب سے تحقیقات میں تعاون کرنے کی ہدایت کی۔

[embedyt]https://www.youtube.com/watch?v=3bgDy9yZWxY[/embedyt]

سہیل انور سیال نے گرفتاری سے بچنے کے لئے سکھر میں ہائی کورٹ سے رجوع کیا عبوری ضمانت حاصل کرنے کی درخواست کی جسے عدالت نے منظور کر لیا عدالت نے نیب کو چھ اگست کے لیے نوٹس جاری کردیا اور سہیل انور سیال کو گرفتار کرنے سے روک دیا۔



صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے سابق وزیر داخلہ نے کہا کہ میں اپنے خلاف الزامات کا سامنا کروں گا اور اپنے آپ کو بے گناہ ثابت کروں گا جو قانونی حق مجھے حاصل ہے وہ ضرور استعمال کروں گا۔