پریس کلب کے صدر پر تشدد، پی ٹی آئی کی تشدد کی پالیسی کے فروغ کا نتیجہ ہے: نواب یوسف تالپور 

کراچی:  پاکستان کے سینئر پارلیمینٹرین او ررکن قومی اسمبلی نواب یوسف تالپور نے ایک ٹی وی پروگرام میں پی ٹی آئی کے رکن ڈاکٹر مسرور سیال کی جانب سے کراچی پریس کلب کے صدر امتیاز فاران پر تشدد کی شدید الفاظ میں مذمت کر تے ہوئے کہا ہے کہ ان کے مربی عمران خان نے معاشرے اور سیاست میں متشددانہ پالیسی کو جو پروان چڑھایا ہے اس کے اثرات اب دیکھنے کو مل رہے ہیں۔

[embedyt]https://www.youtube.com/watch?v=3bgDy9yZWxY[/embedyt]

انہوں نے کہا کہ عمران خان ذہنی مریض ہیں، خودبھی تشدد کو فروغ دیا اور اپنے کارکنوں میں بھی پروان چڑھایا۔انہوں نے کہا کہ جب عمران کرکٹ کھیلتے تھے تو کراچی کے گراؤنڈ میں ایک بچہ انہیں داد دینے کے لئے آگیالیکن انہوں نے بچے کو گلے لگانے کے بجائے لات ماری تھی جس کی تمام دنیا کے کھلاڑیوں نے شدید مذمت کی تو انہوں نے روایتی انداز میں یو ٹرن لیتے ہوئے معافی مانگنی پڑی۔انہوں نے کہاکہ کھلاڑی تو بہت ٹھنڈے ذہن اورمزاج کے حامل ہوتے ہیں، لیکن یہ صاحب تو انتہائی بد مزاج اورمتشد د انہ ذہن کے حامل ہیں اور اب معاشرے میں اسی ذہنیت کو فروغ دے رہے ہیں، جس کی تازہ مثال حالیہ واقعہ ہے۔



انہوں نے کہا کہ عمران خان ذہنی مریض ہیں اس لیئے انہیں اور ان کے ساتھیوں کو چاہیئے کہ فوری طور پر ذہنی ہسپتال میں اپنا علاج کرائیں تاکہ وہ اپنی اس خطرناک بیماری سے صحت یاب ہوکر ملک و قوم کی بہتری اور معاشرے میں عدم تشدد کو فروغ دے سکیں۔ انہوں نے کہا کہ کراچی پریس کلب کے صحافیوں اور صحافی تنظیموں نے جو مطالبات کئے ہیں، ان کی ہم مکمل حمایت کرتے ہیں اور جن مطالبات کا حکومت سندھ سے تعلق ہے، میں انہیں کہوں گا کہ وہ فوری طور پران مطالبات منظور کریں۔