کیب ایگریگیٹرز (اوبر ، کریم اور دیگر) جو آن لائن کے پلیٹ فارم استعمال کررہے ہیں کو قابل ٹیکس خدمات ڈکلیئر کیا گیا ہے، سندھ ریونیو بورڈ

کراچی – سندھ حکومت نے کیب ایگریگیٹرز کی جانب سے فراہم کردہ خدمات پر سندھ سیلز ٹیکس 5 فیصد شرح کے حساب سے نافذ کیا ہے۔ سندھ ریونیو بورڈ کی جانب سے آج ایک جاری کردہ بیان کے مطابق چند وضاحتیں دی گئی ہیں تاکہ کوئی بھی کسی بھی قسم کی کنفیوژن کا شکار نہ ہو۔ سندھ کے بجٹ 2019 میں کیف ایگریٹرز ( جنہیں رائڈ ہیلنگ سروسز بھی کہاجاتا ہے ) بشمول کیف ڈرائیورز جو کہ( کیف سروسز یا ریٹ اے کار سرو سز یا ٹیکسی سروسز ) کی خدمات سرانجام دے رہے ہیں اور کیب ایگریگیٹرز (اوبر،کریم اوراس طرح کی دیگر)آن لائن کے پلیٹ فارم استعمال کررہے ہیں کو قابل ٹیکس خدمات ڈکلیئر کیاگیا ہے اور اس پر کم شرح کے حساب سے ٹوٹل کمپونٹس پر 5 فیصد کی شرح سے ٹیکس نافذ کیا گیا ہے۔

[embedyt]https://www.youtube.com/watch?v=3bgDy9yZWxY[/embedyt]

ترجمان نے کہا کہ 13 فیصد اور 26 فیصد کے حساب سے سروس ہونے والے پروپیگنڈا میں کسی بھی قسم کی کوئی سچائی یا صداقت نہیں ہے ۔ واضح رہے کہ رینٹ اے کار کی خدمات اور واہیکل رینٹنگ سروس (یعنی ریڈیو کیب سروس مثلاً میٹرو کیب، وائٹ کیب وغیرہ) پہلے ہی سے 10 فیصد سندھ سیلز ٹیکس اپنی خدمات پر ادا کررہی ہیں۔ کیب ایگریگیٹرز کی سروسز اور کیب ڈرائیورز جوکہ اس طرح کے رینٹ کار اوریڈیوکیب کی خدمات سے منسلک ہیں یا جو اس سے قبل ٹیکس نیٹ سے باہر تھے اور جس کی وجہ سے ان کے کمپیٹیٹر ز میں ٹیکس کے حوالے سے امتیاز بڑھتا جارہاتھا یا سامنے آرہا تھا،



ان پر سندھ سیلز ٹیکس کم شرح کے حساب سے یعنی فیصد 5 ان کی ٹیکسی کی خدمات پر جو کہ وہ آن لائن مارکیٹ کے پلیٹ فارم کی خدمات کے طورپر انجام دے رہے ہیں عائد کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ان الزام میں کوئی جان نہیں ہے کہ ٹیکس ایڈوانٹیج آن لائن مارکیٹ پلیٹ فارم کے تحت ٹیکسی سروسز کے ذریعے عام لوگوں کو روزگار فراہم کررہا ہے کو دیا جارہا ہے ۔ اشیاء اور خدمات پرہر ایک مینوفیچکر یا پروڈیوسر یا خدمات فراہم کرنے والا جوکہ ملازم کے مواقع فراہم کررہا ہے مگر وہ جو ٹیکس ادا کررہے ہیں۔



واضح رہے کہ سواری فراہم کرنے والی خدمات اور کیب سروسز جو کہ اُن کے آن لائن مارکیٹ پلیٹ فارم کی بنیاد پر ہے اور جوکہ مجموعی پرائز پر سیلز ٹیکس/ سروسز ٹیکس / وی اے ٹی ادا کررہے ہیں ،متعلقہ اسٹینڈرڈ ریٹ( جو کہ سندھ کی اسٹینڈر کیش رح 13 فیصد سے زائد ہے)۔ اور یہ انڈیا ، یو کے ، یورپی ممالک ، آسٹریلیااور دیگر ممالک سے۔
آخر میں تمام متعلقہ افراد کے لیے کایک بار پھر وضاحت کی گئی کہ رائیڈ ہیلنگ سروس پر سندھ ٹیکس سیلز کی شرح 5 فیصد ہے نہ کہ 13 فیصد اور نہ ہی 26 فیصد اور اس کا اطلاق یکم جولائی 2019 سے ہوگا۔