کراچی: سٹی کورٹ میں سانحہ مہران ٹاؤن کیس کے سلسلے میں ملزمان اور ورثا کے درمیان دیت کی رقم کی ادائیگی کے معاملات طے پاگئے۔

کراچی: سٹی کورٹ میں سانحہ مہران ٹاؤن کیس کے سلسلے میں ملزمان اور ورثا کے درمیان دیت کی رقم کی ادائیگی کے معاملات طے پاگئے۔

سانحہ مہران ٹاؤن میں جاں بحق ہونے والے 7 افراد کے ورثا نے دیت کی رقم کے شیڈول پر آمادگی ظاہرکر دی ہے، جب کہ جاں بحق 9 افراد کے اہل خانہ کی جانب سے صلح کا حلف نامہ پہلے ہی جمع کروایا جا چکا ہے۔

ورثا کے مطابق عدالت کی جانب سے 42 لاکھ روپے فی کس دیت طے کی گئی تھی، دیت کی یہ رقم مکان مالک اور فیکٹری مالک ادا کریں گے، فیکٹری مالک حسن مہتا 60 فی صد، جب کہ مکان مالک طارق فیصل 40 فی صد رقم ادا کریں گے۔

شیدول کے مطابق ابتدائی طور پر 10،10 لاکھ روپے کے چیک ورثا کو دیے جائیں گے، ورثا نے بتایا کہ ہر 6 ماہ بعد 4 لاکھ روپے ادا کیے جائیں گے، اور یوں 2 سال مدت کے دوران دیت کی تمام رقم ادا کی جائے گی۔

دیت کی ادائیگی کے لیے کل کاغذات پر دستخط کیے جائیں گے، جب کہ عدالت نے ملزمان کی درخواست ضمانت کی سماعت 18 نومبر تک ملتوی کر دی۔

یاد رہے اگست میں کراچی کے علاقے مہران ٹاؤن میں چمڑا رنگنے کی فیکٹری میں خوف ناک آگ بھڑک اٹھی تھی جس میں فیکٹری کے 16 ملازمین جاں بحق ہوگئے تھے