ٰچیئرمین سینیٹ تبدیل ہوگا نہ ہی حکومت کے خلاف تحریک چلے گی، وفاقی وزیر غلام سرور خان کا دعوی

وفاقی وزیر اور پاکستان تحریک انصاف کے رہنما غلام سرور خان نے دعویٰ کیا ہے کہ پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ نون میں جلد فارورڈ بلاک بن سکتا ہے کیونکہ دونوں پارٹیوں کے اکثر رہنماؤں کا پی ٹی آئی سے رابطہ ہے۔

[embedyt] https://www.youtube.com/watch?v=3bgDy9yZWxY[/embedyt]

انہوں نے پورے اعتماد  کےانداز میں کہا کہ چیئرمین سینیٹ تبدیل ہو گا نہ ہی حکومت مخالف تحریک چل سکے گی۔  مولانا فضل الرحمنٰ کی آل پارٹیز کانفرنس سے حکومت کو کوئی خطرہ نہیں ہے کیونکہ عوام مولانا فضل الرحمنٰ کے ساتھ نہیں ہیں، اگر عوام ان کے ساتھ ہوتے تو وہ الیکشن جیت جاتے ۔مولانا فضل الرحمنٰ کے پاس چند مدرسے ہیں اور کچھ بچے ۔ وفاقی وزیر غلام سرور خان نے کہا کہ اپوزیشن ان ہاؤس تبدیلی کیسے لائے گی ا پوزیشن تو آپس میں ایک ساتھ نہیں چل سکتی۔



انہوں نے کہا کہ بجٹ کی منظوری کوئی مسئلہ نہیں ہے بجٹ نون لیگ اور پیپلز پارٹی کے ووٹ کے بغیر ہی منظور ہو جائے گا چوہدری نثار کے متعلق گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر غلام سرور خان کا کہنا ہے کہ چوہدری نثار نے پہلے وزیر اعظم بننا تھا پھر وزیراعلیٰ اب خود چودھری نثار سے پوچھا جائے کہ ان کے خلاف کیا ہوا چوہدری نثار کو چاہیئے کہ یاحلف اٹھائیں یا پھر مستعفی ہو ں ۔