74

حکومت سندھ نے ہر ادارے کو تباہ کردیا ہے جی ڈی اے

گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس (جی ڈی اے )نے مطالبہ کیا ہے کہ صاف شفاف احتساب کے لیے سندھ حکومت کو فوری طور پر برطرف کیا جائے چونکہ سندھ حکومت کے ہوتے ہوئے احتساب ممکن نہیں ہے۔ جی ڈی اے اور مسلم لیگ فنکشنل کے سر براہ پیر صاحب پگارا نے کہا ہے کہ سندھ میں کرپشن اور زرعی تباہی کی ذمہ دار پیپلز پارٹی کی حکومت ہے۔ ملک کے وسائل اور گورننس کے تحفظ کا وقت آگیا ہے۔ عدالتیں سندھ میں جرائم، خراب حکمرانی اور کرپشن کا نوٹس لیں۔ اتوار کو گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس (جی ڈی اے) کی کور کمیٹی کا اجلاس پیر صاحب پگارا کی صدارت عرفان اللہ مروت کی رہائش گاہ پر منعقدہ ہوا۔اجلاس میں پیر سید صدرالدین شاہ راشدی، ایاز لطیف پلیجو،مرتضی جتوئی،غلام ارباب رحیم،سید غو ث علی شاہ سردار عبدالرحیم ، عرفان اللہ مروت نند کمار گھوکلانی سید شفقت حسین شاہ اور دیگر شریک ہوئے۔اجلاس میں ملک کی مجموعی سیاسی صورتحال ، پیپلز پارٹی پارلیمنٹرین کے صدر آصف علی زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور کی گرفتاری کے بعد سندھ کی سیاسی صورتحال پرتبادلہ خیال کیا گیااور حالیہ پیش ہونے والے وفاقی اور صوبائی بجٹ کا جائزہ لیا گیا۔جی ڈی اے رہنماو¿ں نے مطالبہ کیا کہ عمران خان سندھ کے لیے خصوصی پیکیج دیں۔اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے پیر صاحب پگارا نے کہاکہ سندھ میں کرپشن اور زرعی تباہی کی ذمہ دار پیپلز پارٹی کی حکومت ہے۔حکمرانوں اور افسروں کو کرپشن کا حساب دینا ہوگا۔



انہوں نے کہاکہ ملک کے وسائل اور گورننس کے تحفظ کا وقت آگیا ہے۔ عدالتیں سندھ میں جرائم، خراب حکمرانی اور کرپشن کا نوٹس لیں۔سندھ میں عوام سے انصاف جی ڈی اے حکومت کریگی۔ایاز لطیف پلیجو نے کہاکہ تھر اور بدین میں بچے مرتے رہے اور وزیر اجلاس کرتے رہے۔حکمرانوں کے کرپشن کے دفاع کے لیے سندھ کارڈ اب نہیں چلے گا۔عورتوں، اقلیتوں اور کسانوں سے انصاف ہی حقیقی جمہوریت ہے۔پیپلز پارٹی نے سندھ کو ایڈز دی اورشہر کچرے کے ڈھیر بنا دیئے۔وفاق پانی، روزگار اور وسائل میں سندھ سے انصاف کرے۔جمہوریت، انسانی حقوق، احتساب اور صوبائی خودمختاری کی پاسداری کرنی ہوگی۔پیر صدر الدین شاہ نے کہاکہ سندھ کے تمام وسائل بیدردی سے لوٹ لیے گئے۔سندھ کو بہتر گورننس جی ڈی اے دے گا۔انہوں نے کہاکہ جی ڈی اے کا وزیر وہ ہوگا جس کا دامن کرپشن اور جرائم سے پاک ہو۔انہوں نے کہاکہ قربانی سے پہلے بڑی قربانی ہوگی۔عرفان اللہ مروت نے کہاکہ سندھ کے لوٹے ہوئے ایک ایک روپے کا حساب لیں گے۔



سندھ حکومت کو ختم کئے بغیراحتساب کا عمل مکمل نہیں ہوسکتا ہے۔سندھ حکومت کرپٹ حکومت ہے۔مرتضیٰ جتوئی نے کہاکہ سندھ کے لوگ غربت اور لاقانونیت کے گھیرے میں ہیں۔صفدر عباسی نے کہاکہ سندھ کے لوگ اب کرپشن اور لوٹ مار کے خلاف اٹھ کھڑے ہوں۔ان رہنماو¿ ں نے کہاکہ پورا سندھ سوکھ کے ویران ہو رہا ہے اور پیپلز پارٹی بیانات داغ رہی ہے۔عالمی اسٹیبلشمینٹ اور بھارت ہم پر اسٹریٹیجیکلی حملہ آور ہو رہے ہیں۔ صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ایاز لطیف پلیجو نے کہا کہ جی ڈی اے نے ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔حکومت مہنگائی پر کنٹرول کرے۔انہوں نے کہاکہ سندھ کی وحدت پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔صرف گرفتاریاں کافی نہیں ، سزا بھی دی جائے۔کرپشن میں ملوث افراد کا بے رحم احتساب کیا جائے۔سندھ حکومت نے ہر ادارے کو تباہ کردیا ہے۔ ایڈز نے سندھ کو برباد کردیاہے۔سندھ میں ایڈز اور ہیپاٹائٹس کو کنٹرول کرنے کے بجائے اپنی کرپشن پر پردہ ڈالنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ پولیس آرڈر میں آئی جی سندھ کو بے اختیار کردیا گیا۔ صوبوں کو لون کی مد میں ملنے والے پیسوں کی بھی تحقیقات کی جائے۔پولیس آرڈر پر اعلی عدلیہ نوٹس لے۔



ذوالفقار مرزا نے کہاکہسندھ کی عوام اپنے آپ کو خوش نصیب سمجھ رہی ہے۔ چور اور ڈکیت کا حال یہ وہ اپنے ہی جیلوں میں قید ہیں۔ انہوں نے کہاکہ بڑی گرفتاری سے لوگ مہنگائی کو بھول گئے ہیں۔ چند برسوں پہلے میرے ساتھ جو کچھ کیا سب کو معلوم ہے۔ میرے اوپر جھوٹے مقدمات بنائے گئے۔ بلاول بھٹو اپنے ابا اور پھوپھی کے نقش و قدم پر نہ چلے۔میرے اور بدین کے کے لوگوں کے خلاف مقدمات سیاسی انتقام نہیں ہے۔انہوںنے کہاکہ بلاول بھٹو کہتے ہیں ہماری حکومت میں سیاسی انتقام نہیں ہے۔ بدین کا پانی بند کردیا گیا۔میں نے عوام کے لئے احتجاج کیا بلاول کے گھر پر ڈکیتی نہیں کی۔ سارے چور جیل جائیں گے۔سندھ میں تو ہمیں سب پتا تھا لیکن میاں صاحب کے اب پتہ چلاہے۔احتساب کا عمل آخری حد تک جانا چاہئے۔چوہدری نثار کی کاوش سے زرداری کی کرپشن سامنے آئی ہے۔آج آپ لوگوں کو سمجھ آ گئی ہوگئی کہ میں نے سب کہا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں