سندھ لٹریچر فیسٹیول کے ذریعے دنیا کے آگے ملک، بالخصوص سندھ کا مثبت امیج اجاگر کیا جانا چاہئے، بیرسٹر مرتضیٰ وہاب

کراچی فروری 24: وزیراعلیٰ سندھ کے مشیر برائے اطلاعات ، قانون اور اینٹی کرپشن بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ سندھ لٹریچر فیسٹیول کے ذریعے دنیا کے آگے ملک کا بالخصوص سندھ کا مثبت امیج اجاگر کیا جانا چاہئے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سندھ لٹریچرل فیسٹول کے آخری روز بطور مہمان خصوصی شرکت کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے معاشرے میں منفی سرگرمیوں کو فروغ دیا جا رہا ہے ،آج یہاں بہت بڑا میلہ ہے سندھ کے لوگوں کی بڑی اکثریت شریک ہے۔ ۔بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہاہے کہ سندھ کے عوام کے لئے چیلنجز نئی بات نہیں ہے اور سندھ نے ماضی میں چیلنجز کا سامنا کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ سندھ کے عوام نے پیپلز پارٹی کو مینڈیٹ دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ چوتھی اسمبلی ہے کہ سندھ میں پیپلز پارٹی کو عوام نے ووٹ دے کر منتخب کیا ہے۔ بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہاہے کہ سات ماہ میں وفاقی حکومت نے این ایف سی ایوارڈ میں سندھ کے ایک سو چھہ ارب کم دیئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت این ایف سی کا حصہ نہیں دے گا تو سندھ میں ترقی کیسے ہوگی ۔انہوں نے کہا کہ سندھ کے پانی کی چوری جاری ہے پانی کا کم حصہ مل رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ سندھ کو بجلی اور گیس اس کے حق سے کم دی جا رہا ہے۔بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہاہے کہ پیپلز پارٹی کوئی تفریق نہیں کرتی، اور میں خود کو اردو بولنے والا سندھی سمجھتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ سندھ کی ثقافت نے تمام زبانوں کو پنپنے دیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں