اسپیکر آغا سراج درانی نے حلیم عادل شیخ اور خرم شیر زمان کوڈانٹ دیا

کراچی ( نامہ نگار خصوصی ) سندھ اسمبلی کا اجلاس بدھ کو اسپیکر آغا سراج درانی کی صدارت میں سوا گھنٹے سے زائد کی تاخیر سے شروع ہواوقفہ دعا کے بعد اسپیکر نے شہلا رضا سے ایکسیڈنٹ کے بارے پوچھا کہ قائد حزب اختلاف فردوس شمیم نقوی اور بعض دیگر ارکان پوائنٹ آف آرڈر پر بولنے کے لئے اپنی نشستوں سے اٹھ کھڑے ہوئے جس پر اسپیکر نے حلیم عادل شیخ اور خرم شیر زمان کوڈانٹ دیا اور کہا کہ یہ کوئی طریقہ نہیں کہ ہمیشہ آپ کھڑے ہو جاتے ہیں۔



اسپیکر آغا سراج کا کہنا تھا کہ میں آپ سب کو عید کی مبارک باد دینا چاہتا تھا لیکن آپ نے شور مچا دیا، انہوں نے کہا کہ آپ لوگوں نے تو اپنے گھر والوں کے ساتھ منائی لیکن میری عید جیل میں گزری لیکن غریب قیدیوں کے ساتھ عید مناکر بہت مزہ آیا اور بہت خوشی بھی ہوئی ،مجھ سے بہت سے لوگ جیل میں ملنے آئے۔مکیش چاﺅلہ اور سعید غنی نے بھی عید پر جیل کا دورہ کیا۔اسپیکر نے کہا کہ عیدجیسے تہواروں پر اگر آپ لوگ بھی کچھ وقت نکال کر غریب قیدیوںسے ملنے جن کا کوئی نہیں ہے اگر مٹھائی یا کھانا وغیرہ لیکر چلے جائیں تو ان کو بہت خوشی ہوگی اور یہ بہت نیکی والاکام بھی ہے۔