شہباز شریف نے لندن سے پاکستان پہنچ کر مخالفین کے منہ بند کردیئے

پاکستان مسلم لیگ نون کے صدر اور قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے لندن سے پاکستان پہنچ کر سیاسی مخالفین کے منہ بند کر دی ہے وہ اپنے خلاف قائم مقدمات میں ضمانت اور بیرون ملک جانے کی اجازت ملنے کے بعد سات ہفتے لندن میں قیام کرنے کے بعد لاہور واپس آگئے اس دوران پاکستان تحریک انصاف کے رہنماؤں زلفی بخاری اور فردوس عاشق اعوان سمیت سیاسی مخالفین نے دعویٰ کیا تھا کہ شہبازشریف پاکستان سے مقدمات کی وجہ سے بھاگ گئے ہیں اور وہ پاکستان واپس نہیں آئیں گے۔



زلفی بخاری تو ایک روز پہلے تک یہ کہہ رہے تھے کہ شہباز شریف پاکستان جانے کا پروگرام آخری لمحات میں تبدیل کردیں گے اور پاکستان نہیں جائیں گے دوسری طرف رانا ثناءاللہ اور مسلم لیگ نون کے دیگر رہنما بار بار کہہ رہے تھے کہ شہباز شریف بجٹ پیش ہونے سے پہلے پاکستان پہنچ جائیں گے اور قومی اسمبلی کے بجٹ اجلاس میں شریک ہوں گے شہباز شریف لندن سے لاہور ائیرپورٹ پہنچے کارکنوں نے ان کا استقبال کیا اور آنے والے پارٹی رہنماؤں اور کارکنوں کا شکریہ ادا کیا اور ایک قافلے کی شکل میں انہیں ان کی رہائش گاہ کی طرف لے جایا گیا مسلم لیگ نون کے رہنما احسن اقبال کا کہنا تھا کہ حکومت کا سارا کاروبار جو جھوٹ پر چل رہا ہے۔



یہ لوگ نفرت اور تکبر کی سیاست کرتے ہیں مسلم لیگ نون کے رہنما امیر مقام کا کہنا تھا کہ شہبازشریف کی واپسی اور پوزیشن کے لیے خوشی کا دن اور پی ٹی آئی حکومت کے لیے معطل کی گھڑی ہے مسلم لیگ کے رہنما پرویز ملک کا کہنا تھا کہ شہباز شریف نے وطن واپس آکر اپنا وعدہ پورا کر دیا ملک میں ہر شعبے کی بدحالی کا شکار ہے ایسے میں قوم کو ایسی لیڈر شپ کی ضرورت ہے جو انہیں مشکلات سے نکال سکے یاد رہے کہ شہباز شریف 10 اپریل کو طبی معائنہ کرانے کے لیے برطانیہ گئے تھے اور وہاں ان کے پوتے پوتیاں بھی ان کا انتظار کر رہی تھی ۔احمد نواز شریف نے لندن میں اپنے اہل خانہ کے ساتھ عید منائی اور اب وہ بجٹ اجلاس سے پہلے پاکستان واپس پہنچ گئے ہیں۔