برٹش ایئرویز اور پاکستان کے درمیان 11 سال بعد فضائی رابطہ

لندن … برطانوی ایئرلائن برٹش ایئرویزکی پرواز گیارہ سال بعد آج پاکستان کے لیے روانہ ہوگی، لندن سے طیارہ رات سوا نوبجے اسلام آباد کے لیے اڑان بھرے گا۔تفصیلات کے مطابق برطانوی ایئرلائن برٹش ایئرویزکی پہلی پرواز آج پاکستان روانہ ہوگی، برٹش ایئرویز اور پاکستان کے درمیان 11سال بعد فضائی رابطہ ہوگا۔ لندن سے پہلی پرواز آج رات سوا نوبجے اسلام آباد کے لیے روانہ ہوگی۔پروازیں منگل، جمعرات اور اتوار کواسلام آباد کے لیے روانہ ہوں گی۔



ایشیائی امورکے برطانوی وزیرمارک فیلڈ نے پروازوں کی بحالی کوخوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک کے تعلقات مزید گہرے ہوں گے، فلائٹس کی بحالی معیشت کے لیے سودمند ثابت ہوگی۔یاد رہے کہ رواں سال جنوری میں برٹش ہائی کمشنر نے سیکرٹری ایوی ایشن کو خط میں کہا تھا کہ رواں سال جون سے برٹش ایئر ویز اسلام آباد سے اپنا فضائی آپریشن شروع کرے گی۔ دوسری جانب ایک خبر یہ بھی تھی کہ برٹش ہائی کمشنر نے سیکرٹری ایوی ایشن کو خط میں کہا ہے کہ رواں سال جون سے برٹش ایئر ویزاسلام آباد سے اپنا فضائی آپریشن شروع کرے گی۔



برٹش ہائی کمشنرنے سیکرٹری ایوی ایشن کو خط لکھا ،
جس میں کہا گیا ہے کہ پاکستان ایک محفوظ اور پُرامن ملک ہے، پاکستان نے دہشت گردی کے خاتمے کے لئے بھرپور اقدامات کیے، پاکستان میں برٹش ایئرویز کا آپریشن دس سال سےبند تھا۔خط میں مزید لکھا گیا ہے کہ رواں ماہ برٹش ائیر ویز کا تین رکنی وفد29اور 30 جنوری کو اسلام آباد ائیرپورٹ پہنچے گا، وفد میں برٹش ایئر ویز کے دنیا بھر کے ایئرپورٹس کے ہیڈ پال کونٹری، ایڈوائزر برٹش ایئر ویز ڈیوڈ کریگ اور ڈائریکٹر سیفٹی جوہن مانکس شامل ہیں۔