بھارت میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی پاکستان میں مسلسل اضافہ

عوام کے لیے یہ بات حیران کن ہے کہ پڑوسی ملک بھارت میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں مسلسل دوسری مرتبہ کمی کر دی گئی ہے جبکہ پاکستان میں مسلسل اضافہ کیا گیا ہے ۔حکومت پاکستان کا کہنا ہے کہ عالمی منڈی میں پیٹرولیم کی قیمتوں میں اضافے کی وجہ سے پاکستان میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ مجبوراً کیا گیا ہے جب کہ پڑوسی ملک بھارت میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں مسلسل دوسری مرتبہ کمی کر دی گئی ہے۔



پی ٹی آئی کی حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے پر اپوزیشن کا اتحاد بھی مسترد کر دیا ہے پی ٹی آئی حکومت کا موقف ہے کہ موجودہ حالات سابقہ حکومت کی اقتصادی ناکامی اور بحران کا نتیجہ ہیں موجودہ حکومت حالات کو بہتر بنانے کے لیے کام کر رہی ہے تھوڑا وقت دیا جائے وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان کا کہنا ہے کہ آپریشن مگرمچھ کے آنسو بہا رہی ہے جبکہ حکومت گزشتہ برس اگست سے اب تک پٹرولیم مصنوعات پر 60 ارب روپے سے زائد سبسڈی ادا کر چکی ہے اس سے پہلے حماد اظہر نے بھی حکومت کا دفاع کرتے ہوئے کہا تھا کہ پی ایس او نے پرانے ریٹ پر کارگو بکنگ کر رکھی تھی اس لیے پٹرولیم مصنوعات میں اضافہ کرنا پڑا ۔