کراچی کے 3 بڑے اسپتالوں کا معاملہ … سول سوسائٹی میدان میں آگئی

کراچی پریس کلب میں ہونے والی پریس کانفرنس میں سول سوسائٹی کے رہنماؤں نے کراچی میں قائم تین اہم اور بڑے اسپتالوں کو 18 ویں ترمیم کی موجودگی کے باوجود وفاقی حکومت کی طرف سے اپنی تحویل میں لئے جانے کے فیصلے پر اپنی تشویش کا اظہار کیا ہے اور کہا ہے کہ وفاقی حکومت نے گزشتہ دنوں ایک نوٹیفکیشن کے زریعے پاکستان میں دل کے امراضِ کے سب سے بڑے اسپتال نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیوویسکیولر ڈزیزز (NICVD)، جناح پوسٹ گریجویٹ میڈیکل سینٹر، اور نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف چائیلڈ ہیلتھ کو سپریم کورٹ کے 17 جنوری کے فیصلے کا سہارہ لیتے ہوئے اپنی تحویل میں لینے کا اعلان کیا ہے۔ جب کہ سپریم کورٹ میں سندھ حکومت کی جانب سے ایک رویوپٹیشن پہلے سے داخل ہے جس پر ابھی فیصلہ ہونا باقی ہے۔ ہم سمجھتے ہیں کہ وفاقی حکومت کی جانب سے یہ اقدام آئین میں کی گئی 18 ویں ترمیم کے نتیجے میں ملی صوبائی خودمختاری کی صریحاً خلاف ورزی ہے اور صحت کے ان تین اہم اداروں کی تباہی کا سبب بھی ہو سکتا ہے۔۔۔