محکمہ ٹرانسپورٹ سندھ کا زائد کرایہ وصول کرنے والی گاڑیوں کے خلاف کریک ڈاوٴن کا آغاز

کراچی –  محکمہ ٹرانسپورٹ سندھ نے زائد کرایہ وصول کرنے والی گاڑیوں کے خلاف کریک ڈاوٴن کا آغاز کردیا صوبائی ٹرانسپورٹ اتھارٹی نے کراچی سے صوبے کے مختلف شہروں کے درمیان چلنے والی مسافر کوچز،وین،اور بسوں کی چیکنگ کے دوران ڈیڑھ سو سے زائد مسافروں سے وصول کیاگیا زائد کرایہ واپس کراکر ٹرانسپورٹرز پرہزاروں روپے جرمانہ بھی عائد کیا۔


تفصیلات کے مطابق محکمہ ٹرانسپورٹ سندھ نے انٹرسٹی ٹرانسپورٹ میں زائد کرایوں کی وصولی کی خلاف مہم کا آغاز کردیا ہے جمعرات کے روز صوبائی ٹرانسپورٹ اتھارٹی کے چیئرمین کی ہدایت پرسیکریٹری صوبائی ٹرانسپورٹ اتھارٹی ذوالفقار جوکھیو نے سپرہائی وے پرکراچی ٹول پلازہ کے قریب مختلف شہروں کے درمیان جانے والی مسافر گاڑیوں کو روک کر چیکنگ کی اورمسافروں کی شکایت پر بتیس مسافر کوچز،بسوں،وین کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے چھبیس ہزار تین سو روپے جرمانہ عائد کیا کاروائی کے دوران محکمہ ٹرانسپورٹ کے حکام نے مسافروں سے وصول کیا گیا زائد کرایہ موقع پر ہی واپس کرایا اور مختلف گاڑیوں کے مسافروں کو بتیس ہزار روپے کرائے کی مد میں مجموعی طورپر واپس کرائے گئے۔


اس موقع پر صوبائی ٹرانسپورٹ اتھارٹی کی روڈ چیکنگ مہم کے دوران موٹروے پولیس نے بھی تعاون کیا صوبائی ٹرانسپورٹ اتھارٹی کے سیکریٹری ذوالفقار جوکھیو نے بتایا کہ وزیر ٹرانسپورٹ اویس قادراور چیئرمین پی ٹی اے کی خصوصی ہدایت پر مہم کا آغاز کیاگیا ہے اور یہ سلسلہ چاند رات تک جاری رہے گا انہوں نے بتایا کہ اسی طرز کی کاروائی اندرون شہر موجود بسوں اڈوں اور اور کراچی سے دیگر شہروں کو جانیوالی دیگر شاہراہوں پر بھی کی جائے گی انہوں نے ٹرانسپورٹرز سے بھی درخواست کی کہ وہ مسافروں کو پریشان کرنے اور زائد کرایہ وصول کرنے سے گریز کریں۔