کراچی سرکلر ریلوے کی بحالی کے لیے گلشن اقبال بلاک 11 میں دوسرے روز بھی آپریشن کیا گیا

سپریم کورٹ کے احکامات کی روشنی میں کراچی سرکلر ریلوے کی بحالی کے لیے گلشن اقبال بلاک 11 میں دوسرے روز بھی آپریشن کیا گیا ریلوے ٹریک کو تجاوزات اور غیر قانونی تعمیرات سے پاک کرنے کے لیے آپریشن نیپا چورنگی کے قریب کراچی یونیورسٹی اسٹیشن سے شروع کیا گیا آپریشن میں ضلعی انتظامیہ اور محکمہ ریلوے نے مشترکہ طور پر حصہ لیا جبکہ نقص امن کے باعث پولیس کی بھاری نفری بھی موقع پر موجود تھی آپریشن سے پہلے جھگیوں میں رہائشی افراد کو نوٹس دے دیا گیا تھا جس کے بعد لوگوں نے نقل مکانی شروع کردی اور اپنی اہم اشیاء وہاں سے ہٹانا شروع کی


آپریشن کے دوران ہیوی مشینری کے ذریعے ریلوے ٹریک پر جو پریوں اور غیر قانونی پارکنگ توڑا گیا ایس ایس پی ریلوے کے مطابق آپریشن میں جو حرج سے اردو اسٹیشن تک کہ علاقوں کو تجاوزات سے پاک کرنا ہے سرکلر ریلوے ٹریک کے دونوں جانب سے پچاس تک زمین کو کلیئر کر آنا ہے ۔سپریم کورٹ اس سلسلے میں واضح احکامات جاری کر چکی ہے اور حکومت سندھ نے بھی اس سلسلے میں دو ٹوک موقف اختیار کر رکھا ہے اور آپریشن تیزی سے آگے بڑھایا جا رہا ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں