سپر ہائی وے کی مویشی منڈی میں کرونا ایس او پی کی کھلی خلاف ورزی کا سلسلہ جاری ۔ غیر محتاط رویہ حکومتی کوششوں پر پانی پھیر سکتا ہے ۔ماہرین کو تشویش

سپر ہائی وے کی مویشی منڈی میں کرونا ایس او پی کی کھلی خلاف ورزی کا سلسلہ جاری ۔ غیر محتاط رویہ حکومتی کوششوں پر پانی پھیر سکتا ہے ۔ماہرین کو تشویش ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔سپر ہائی وے کی مویشی منڈی میں قربانی کے جانوروں کی آمد کا سلسلہ جاری ہے روزانہ مختلف شہروں سے قربانی کے جانوروں کے ٹرک سپر ہائی وے کی مویشی منڈی میں پہنچ رہے ہیں جنہیں دیکھنے کے لئے نوجوانوں کی بڑی تعداد بھی مویشی منڈی کا رخ کرنے لگی ہے مویشی منڈی میں جانور لانے والے اور ان کا انتظام سنبھالنے والوں کی جانب سے کرونا ایس او پی کی پابندی کرنے کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے ماہرین نے صورتحال پر تشویش کا اظہار کیا ہے کیونکہ مویشی منڈی کی صورتحال تشویشناک ہے وہاں کرو نا آئی سو پی کی کھلی خلاف ورزی کا سلسلہ جاری ہے لوگ کرونا ایس او پی کو سنجیدگی سے نہیں لے رہے اور پابندیوں کا مذاق اڑا رہے ہیں ہر شخص جانوروں کو ہاتھ لگا رہا ہے اور مختلف جگہوں سے گزر رہا ہے مویشی منڈی میں آنے والی گاڑیاں اور ان میں جوق در جوق آنے والے لوگ صورتحال کو مزید خراب کر سکتے ہیں انتظامیہ کی جانب سے ایس او پی کی پابندی کرانا ضروری ہے لیکن لوگ پرواہ نہیں کر رہے سپر ہائی وے کی مویشی منڈی کرونا ایس او پی کے حوالے سے سندھ حکومت اور کراچی انتظامیہ کی اب تک ہونے والی کوششوں پر پانی پھیر سکتی ہے اس معاملے کو سنجیدگی سے لینا چاہئے