کراچی سے انڈسٹریز کو منتقل ہونے نہیں دینگے

 چیئرمین بلاول بھٹوزرداری کا ویڑن ہے صوبہ میں انڈسٹریز کو فروغ دیا جائے، سید ناصر حسین شاہ انڈسٹریز بھی ہماری ترجیح ہے، صنعتوں سے ملک کا پہیہ چلتا ہے،صوبائی وزیر اطلاعات سندھ سید ناصر حسین شاہ سے کاٹی کے وفد کی ملاقات کراچی۔5 جون:صوبائی وزیراطلاعات و بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ سے کاٹی کے وفد نے ملاقات کی۔ وفد میں کاٹی کے صدر سلیم الزمان، چیئرمین کائیٹ زبیر چھایا، وائیس چیئرمین نگہت اعوان، سابق صدر کاٹی عمر ریحان اور مسعود نقی شامل تھے۔ وفد نے صوبائی وزیرسید ناصر حسین شاہ کو صنعتکاروں کے مسائل کے حوالے سے آگاہی دی۔صوبائی وزیر بلدیات سید ناصر حسین شاہ نے وفد کو مسائل حل کرنے کی یقین دہانی کرائی۔انہوں نے کہاکہ چیئرمین بلاول بھٹوزرداری کا ویژن ہے کہ صوبہ میں انڈسٹریز کو فروغ دیا جائے اور آپ کے مسائل حل کرنے کے احکامات دیئے ہیں،چیئرمین کی ہدایت ہے کہ کراچی میں نیا انڈسٹریل زون قائم کیا جائے۔ سید ناصر حسین شاہ نے کہاکہ کراچی سے انڈسٹریز کو منتقل ہونے نہیں دینگے ، صوبائی حکومت سے متعلق پانی، ٹیکسز،کے ڈی اے اور ایس بی سی اے کے مسائل حل کریں گے۔ انہوں نے مزید کہاکہ ہماری کوشش ہے کہ عام شہریوں کو پانی فراہم کریں،انڈسٹریز بھی ہماری ترجیح ہے، صنعتوں سے ملک کا پہیہ چلتا ہے۔ سید ناصر حسین شاہ نے کہاکہ ٹھیکیدار سب سوائل کے نام پر واٹر بورڈ کی لائنوں سے پانی چوری کر کے انڈسٹریز کو فراہم کرتے ہیں۔ صوبائی وزیر بلدیات نے مشورہ دیتے ہوئے کہاکہ آپ اپنے نام سے سب سوائل واٹر کے لائسنس لیں، تین دن میں لائسنس جاری کئے جائیں گے۔ اس موقع پر صنعتکاروں کی صوبائی وزیر کو ملیر ندی میں اربن فاریسٹ لگانے کی پیش کش کی۔ اس پر سید ناصر حسین شاہ نے کہاکہ اربن فاریسٹ چیئرمین بلاول بھٹوزرداری کا انیشی ایٹو ہے، کل سے کام شروع کریں ، سندھ حکومت مکمل سپورٹ کرے گی۔اس سے قبل کاٹی کے وفد نے صنعتکاروں درپیش مسائل سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ پانی صنعتوں کی بنیادی ضرورت ہے،پانی کی قلت کے باعث صنعتکار شدید متاثر ہوئے ہیں اور جن کے پاس آپشن ہے وہ اپنی صنعتیں کراچی سے منتقل کر رہے ہیں۔ کاٹی وفد نے مزید کہاکہ انڈسٹریلسٹس پر پانی چوری کی ایف آئی آر درج ہوئی ہیں، پوری انڈسٹریز میں ہراسمینٹ ہے اور کے الیکٹرک اور سوئی گیس نے مصیبت ڈالی ہوئی ہے۔ ہینڈ آوٹ نمبر555۔۔۔ایف ایچ بی