امت کے تمام مسائل کا حل محبت، اخوت،ینگانگت ویکجہتی میں ہے فلسطین وکشمیر کی صورت حال ہمارے سامنے ہے

اسلام آباد(بیورو رپورٹ)
جمعیت علماء اسلام کے سنئیر رہنماء نوجوان سکالر حافظ علاؤ الدین سارنگ نےنماز جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امت کے تمام مسائل کا حل محبت، اخوت،ینگانگت ویکجہتی میں ہے فلسطین وکشمیر کی صورت حال ہمارے سامنے ہے ان کیلئے اگر تمام مسلم امہ ایک پلیٹ فارم پر متحد ہو کر ان کا ساتھ دیتی تو آج ان پر ظلم کے پہاڑ نہ توڑے جاتے اور نہ ان کی سرزمین پر قبضہ ہوتا، انہوں نے کہا کہ پاکستان کی سالمیت کیلئے ضروری ہے کہ تمام مسالک فروعی اختلاف اور اختلاف رائے کو پس پشت ڈال کر نئی نسل کی تربیت قرآن وحدیث کی روشنی میں کریں انہوں نے کہا کہ اجتماعیت اور اتحاد ایک فولادی قوت و طاقت ہے، عروج و ترقی کا سبب ہے اور انتشار و اختلاف ضعف و کمزوری ،پسپائی اور زوال کا باعث ہے انہوں نے کہا کہ انتہائی حساس وقت ہے تمام مسلمانوں کو حضور صلی اللہ علیہ وسلم کی سیرت طیبہ پر عمل کرتے ہوئے تحمل و برداشت کے ساتھ اصلاح معاشرہ کیلئے کردار ادا کرنا ہوگا ورنہ خدانخواستہ جذبات کی رو میں بہہ کر ہم اپنی ذات ،معاشرہ اورملک کا نقصان کریں گے انہوں نے کہا کہ آج ایک طرف تو عالمی سطح پر اسلام کے خلاف سازشیں ہو رہی ہیں تو دوسری جانب ہم مسلمان خود آپس میں خانہ جنگی کے شکار ہیں، جماعتوں، گروہوں اور ٹولیوں میں بٹے ہوئے ہیں، ہم میں کا ہر ایک دوسرے کی مخالفت پر کمر بستہ ہے، معمولی باتوں کو ایشو بناکر ہم ایک دوسرے سے بد ظن ہو جاتے ہیں اور بدظنی اس حد تک پہنچ چکی ہے کہ ایک دوسرے کی بات تک سننے کے لیے تیار نہیں ہوتے، اس اختلاف نے ہمیں بہت نقصان پہنچایا ہے، اس سے ہماری داخلی قوت کمزور ہوئی ہے، اس اختلاف کی وجہ سے اسلام کی نشر و اشاعت متاثر ہورہی ہے اس حوالے سے میں اپنے رویوں پر نظر ثانی کرنی ہوگی۔