گوادر بلوچستان اور پاکستان کی ترقی کا دشمن کون ہو سکتا ہے؟

 بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کی گرفتاری سے بھارتی سازش اور نیٹ ورک تو بے نقاب ہو چکا ہے اب باقی کرداروں کا بے نقاب ہونا باقی ہے ۔
گوادر کے فائیو سٹار ہوٹل پر ممبئی حملوں کی طرز کا کیا جانے والا تازہ حملہ یہ بات واضح کرتا ہے کہ دشمن بلوچستان پر نشانہ لگائے بیٹھا ہے اور وہاں حالات خراب کرنا چاہتا ہے سی پیک منصوبے کی کامیابی کیلئے گوادر کا تاریخی کردار ہے حملہ آور اور دشمن نے گوادر کو ٹارگٹ کیا لیکن پاکستان کی بہادر فورسز نے اس حملے اور منصوبے کو ناکام بنادیا ہے ۔
یہ بات قابل ذکر ہے کہ چین کو ون بیلٹ ون روڈ منصوبہ اور اس کے اہم ترین حصہ سی پیک کی وجہ سے اس کےسیاسی اور معاشی حریف اس بات کی سرتوڑ کوشش کر رہے ہیں کہ اس کے منصوبوں کے راہ میں مزاحمت کریں اور اس کے کام کی رفتار کو سست روی کا شکار بنا دیں ۔


پاکستان میں یہ تاثر موجود ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کے دور میں سی پیک منصوبے پر جس تیز رفتاری سے کام ہورہا تھا وہ حکومت کی تبدیلی کے بعد متاثر ہوا اور موجودہ حکومت اس کام کی رفتار کو دوبارہ تیز کرنے کی کوشش کررہی ہے جبکہ سی پیک سرمایہ کاری کے حوالے سے پاکستان میں ہونے والے دیگر منصوبوں پر کام کی رفتار بھی بہت سست روی کا شکار ہے بالخصوص سندھ کے منصوبے التوا کا شکار ہیں ۔اگرچہ حکومتی سطح پر یہ دعوی کیا جاتا ہے کہ سی پیک منصوبے پر کام پہلے کی طرح زور شور سے جاری ہے لیکن جن لوگوں نے سی پیک منصوبوں کی پاک چین میٹنگ میں شرکت کی ہے وہ چین کے بدلے ہوئے رویے کی وجہ سے حکومت کے دانوں سے متفق نظر نہیں آتے ۔
گوادر کے ہوٹل پر حملہ کرنے والے تمام حملہ آوروں کو موت کی نیند صلہ دیا گیا یہ حملہ آور پاکستان کے استحکام اور پاکستان کی معیشت پر حملہ کرنے آئے تھے ۔ممکنہ طور پر وہ چینی انجینئرز اور ماہرین کو نشانہ بناکر سی پیک منصوبے کے حوالے سے دنیا کو منفی خبریں دینا چاہتے تھے حملہ آوروں کی سازش منصوبہ اور حملہ سب ناکام ہوگئے ۔
بلوچستان لبریشن آرمی بی ایل اے نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے بی ایل اے اس سے پہلے بھی کوئی موقع پر پاکستان میں چینی ماہرین اور انجینئرز کو ٹارگٹ کر چکا ہے کراچی میں چینی قونصلیٹ پر حملہ بھی کیا جا چکا ہے ۔
یہ بات قابل ذکر ہے کہ گوادر ترقی کرتا ہے تو وہ دنیا کے لیے اگلا دبئی ہوگا جہاں زبردست تجارتی سرگرمیاں ہوں گی اور دنیا بھر سے لوگ گوادر آیا کریں گے ۔


گوادر بلوچستان اور پاکستان کی ترقی کا دشمن کون ہو سکتا ہے ؟یقیناً وہی لوگ  وہی دشمن جو نہیں چاہتے کہ پاکستان ترقی کرے پاکستان میں استحکام اور خوشحالی آئے پاکستان کے لوگ باالخصوص بلوچستان اور گوادر کے لوگ ترقی یافتہ اور خوشحال ہوں۔ پاکستان کے باہر بیٹھ کر جو لوگ دشمن قوتوں کے آلہ کار بن رہے ہیں اور پاکستان سے غداری کر رہے ہیں ان کے خلاف پاک فوج اور قانون نافذ کرنے والے ادارے سرگرم عمل ہیں ماضی میں بھی ان کی سازشیں اور منصوبے ناکام بنائے گئے ہیں ایک مرتبہ پھر گوادر میں ہونے والا حملہ اور سازش بھی ناکام بنائی گئی ہے اور آئندہ بھی انشاءاللہ ایسا ہی ہوتا رہے گا ۔