پی این ایس سی کے فلیٹ میں ایک اور آئل ٹینکر شامل ہونے سے آمدنی میں اضافہ ہوگا، وفاقی وزیر جہاز رانی و بندرگاہ علی حیدر زیدی

کراچی- وفاقی وزیرجہاز رانی وبندرگاہ علی حیدرزیدی نے کہاہے کہ ملک میں ہونے والی کرپش نے سب کچھ تباہ کردیا ہے،ملک سے کرپشن کا پیسہ لیجانے اور لانے کے لئے ایک ہی کمپنی استعمال ہوئی جس نے زرداری اینڈ کمپنی اور شریف برادران کے پورے ٹبر کے پیسے منتقل کیے،پی این ایس سی کی فلیٹ میں ایک اور آئل ٹینکر شامل ہونے سے آمدنی میں اضافہ ہوگا، انہوں نے کہاکہ اگرحکومت گیس اوربجلی سستی کرے گی تو مزید قرضہ لینا پڑے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پی این ایس سی آئل ٹرمینل کے دورے کے موقع پرصحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔


علی حیدرزیدی کا کہنا تھا کہ خوشی کی بات ہے کہ ہم نے نیا جہاز خریدا ہے ،مزید جہاز بھی خریدے جائیں گے پی این ایس سی کے لیے جہاز خریدنے سے ہمارا فریٹ میں ہونے والا خرچہ کم ہوگا۔ انہوں نے کہاکہ سمندر میں تیل کی تلاش پر کام جاری ہے جمعہ کو میں خود سمندر میں تیل کی تلاش کے جہاز پر گیا تھا ، سمندر میں تیل کی تلاش کے لیے 5500 ہزار میٹر کے ڈرلنگ کرنا ہے ،کل تک 5392 میٹر ڈرلنگ کی جاچکی ہے بس اب مزید دو ہفتے میں تیل یا گیس کی مکمل تفصیلات مل جائیں گی ،قوم دعا کرے بڑی خوشخبری ملے سمندر میں تیل کی تلاش میں جلد اچھی خبر سامنے آئے گی۔ انہوں نے کہاکہ پی این ایس سی کے فلیٹ میں ایک اور آئل ٹینکر شامل ہوگیا ہے،پاکستان سالانہ 4.5 ارب ڈالر درآمدات پر جہاز کا کرایہ ادا کرتا ہے نئے آئل ٹینکر کے پی این ایس سی فلیٹ میں آنے سے تیل کی درآمد کے کرائے میں نمایاں بچت ہوگی پاکستان میں اب نجی شعبہ بھی شپنگ لائن میں سرمایہ کاری کررہا ہے۔ وفاقی وزیرکا کہنا تھا کہ ملک سے کرپشن کا پیسہ لیجانے اور لانے کے لئے ایک ہی کمپنی استعمال ہوئی اورایک ہی کمپنی نے زرداری اینٍڈ کمپنی اور شریف برادران کے پورے ٹبر کے پیسے باہر منتقل کیے ۔ انہوں نے کہاکہ میں یہ کہوں گا کہ عمران خان نے پوری دنیا میں خام تیل کی قیمت بڑھا دی جب عمران خان آئے تو 51 ڈالر فی بیرل تھا اب 70 ڈالر تک پہنچ گیا۔ وفاقی وزیرکا کہنا تھا کہ ٹی ٹی شریف نے کہاں کہاں سے پیسے بھیجے سب سامنے آرہا ہے.


اس سال پاکستان کو نو ارب ڈالر پرانے قرضے ادا کرنے ہیں اگلے سال دو برس میں 27 ارب ڈالر ادا کرنے ہیں ،ہم آئی ایم ایف کے ہاس شوق سے نہیں گئے ،پرانے قرضوں کو ادا کرنے کے لیے آئی ایم ایف کے ہاس جانا پڑا۔ انہوں نے کہاکہ اگر ہم بجلی سستی کردیں تو مزید قرضہ لینا پڑے گا گیس سستا کریں تو قرضہ لینا پڑے گا ،ہم 2021 تک سرکلر ڈیٹ کا مسئلہ حل کردیں گے ، سرکلر ڈیٹ کے خاتمے کے لیے چوری کا خاتمہ کریں گے ،مشکلات ہیں اس کا سامنا کرکے ہی آگے کامیابی ملے گی ،علی زیدی نے کہاکہ پی پی پی والے بھی عدلتوں کے چکر کاٹ رہے ہیں آصف زرداری ملزم سے مجرم ہو جائیں تو بلاول ہاؤس سمیت ان کی جائیدیدیں بھی ضبط ہونی چاہیئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں