سوچیئے عمران خان پر کتنا دباؤ ہوگا؟

میں اس عورت کو پہلے کبھی نہیں جانتی تھی حالانکہ میں 2018 سے فیس بک استعمال کر رہی ہوں لیکن عمران خان کی حکومت میں اس کا پتہ چلا کہ یہ عورت کون ہے ۔
جی ہاں یہ آئی ایم ایف کی سربراہ ہیں ۔
نوازشریف اس عورت کے پاس 4 سے 5 دفعہ گئے لیکن نہ تو کسی چینل نے بتایا نہ فیس بک پر کبھی دیکھا نہ یہ پتہ چلا کے کتنا قرضہ لیا نہ شرائط کا پتا چلا۔
لیکن عمران خان صاحب قرضہ لے رہے ہیں تو شرائط بھی ایک عام آدمی دیکھ رہا ہے اور قرضہ بھی۔
اس وقت میڈیا اتنا کچھ کیوں چھپا رہا تھا اور اب کیوں دکھا رہا ہے۔
میں اپنی جگہ سوچ کے کہہ سکتی ہوں کہ کتنا پریشر ہو گا عمران خان پر میڈیا کا، عوام کا جس میں ایک لیموں مہنگا ہونے پر عمران خان کو پوچھ رہے ہیں۔
وہ باتیں جو عمران خان نے کیں ان پر فیصلے بدلنے میں کتنا سوچنا پڑا ہو گا ۔
ایسے میں دل سے دعا نکلتی ہے خدا عمران خان کا حامی و ناصر ہو خدا پاکستان کے حالات بدلنے میں اسکی کوششوں کو پورا کرے ۔آمین
منجانب… عمران خان کی ایک دعا گو

اپنا تبصرہ بھیجیں