وزیراعظم عمران خان کی ڈومیسٹک کرکٹ کی بہتری کیلئے اسٹرکچر کے آئیڈیا کی مکمل حمایت کرتا ہوں

 

انیس سو بانوے میں ورلڈ کپ جیتنے والی پاکستانی کرکٹ ٹیم کے ہیرو لیگ اسپنر مشتاق احمد کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے ڈومیسٹک کرکٹ کی بہتری کے لیے جس اسٹرکچر کا آئیڈیا پیش کیا ہے میں اس کی مکمل حمایت کرتا ہوں پاکستان میں کرکٹ کی بہتری کے لیے مفید اور معاون ثابت ہو سکتا ہے اور وزیراعظم عمران خان کی رائے بالکل درست ہے سابق ٹیسٹ کرکٹر مشتاق احمد کا کہنا ہے کہ کہیں کھلاڑیوں کو ملازمت ہیں تو مل جائیں گی لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ انہیں مستقبل میں ریجن کرکٹ کا فائدہ نہیں پہنچےگا میرے خیال میں ریجن سے ڈومیسٹک  کرکٹ  کا  اعتماد


 کرکٹ کا اعتماد بحال اور کھلاڑیوں کا انتخاب میرٹ پر ہوگا یاد رہے کہ وزیراعظم عمران خان نے کچھ دنوں قبل ڈپارٹمنٹل کرکٹ کے خاتمے کی خواہش کا اظہار کیا تھا اس حوالے سے پاکستان کرکٹ بورڈ نے فرسٹ کلاس ٹیموں پر مشتمل ڈومیسٹک سیزن کے لیے اپنی تجاویز بھی تیار کر لی ہیں دوسری جانب حبیب بینک نے اپنی ٹیم ختم کرنے کا اعلان کردیا قومی ٹیم کے سابق کپتان جاوید میاں داد اور دیگر کھیلوں سے تعلق رکھنے والے نامور کھلاڑیوں جن میں جہانگیرخان اور اصلاح الدین شامل تھے انہوں نے عمران خان کے اس فیصلے پر کڑی تنقید کی تھی جاوید میانداد کا کہنا تھا کہ عمران خان خود تو پیسہ کمانے کے لیے انگلینڈ میں کاؤنٹی کرکٹ کھیلتے رہے اور اب یہاں ہمارے کھلاڑیوں کا مستقبل تاریک ہو رہا ہے ڈپارٹمنٹل کرکٹ سے ہمارے کھلاڑیوں کو روزگار ملتا ہے نوکری ملتی ہیں ان کے گھروں کے چولہے جلتے ہیں اگر اسے بند کر دیا جائے گا تو سینکڑوں کرکٹر بیروزگار ہوجائیں گے اس کے جواب میں وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ جاوید میاں داد کی اپنی رائے ہے لیکن میں اپنی بات پر قائم ہوں اب ماضی کے مشہور لیگ اسپنرمشتاق احمد نے بھی وزیراعظم عمران خان کی حمایت کردی ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں