شبر زیدی خود نان فائلر نکلے ۔ وہ دوسروں سے ٹیکس کیا لیں گے خود ٹیکس نہیں دیتے

وزیراعظم عمران خان کی حکومت نے سید شبر زیدی کو ایف بی آر کا چیئرمین بنانے کا فیصلہ کیا لیکن نامزد چیئرمین ایف بی آر شبر زیدی خود نان فائلر نکلے۔وہ دوسروں سے ٹیکس کیسے لیں گے جب خود ٹیکس ادا نہیں کرتے۔پی ٹی آئی کی حکومت نے شبر زیدی کو دوسروں سے ٹیکس دینے کے لیے چیئرمین ایف بی آر لگانے کا فیصلہ کیا ہے لیکن خود گزشتہ تین سال سے انکم ٹیکس گوشوارے جمع نہیں کرائے اس حوالے سے نجی ٹی وی چینل نے اپنی رپورٹ میں دعویٰ کیا ہے کہ شبر زیدی خود نان فائلر ہیں یعنی وہ ٹیکس ادا نہیں کرتے۔


موجودہ صورتحال پر سیاسی مبصرین کا کہنا ہے کہ حکومت پوری طرح پھنس چکی ہے ایک طرف معیشت بحرانی صورتحال سے دوچار ہے دوسری طرف حکومت کے پاس اس مشکل سے نمٹنے کے لیے قابل ذہین لوگ نہیں ہیں پارلیمانی پارٹی میں بھی اسی لئے پارٹی قیادت پر تنقید کی گئی تھی کہ پارلیمنٹ کے اندر جو لوگ منتخب ہوکر آئے ہیں ان پر اعتماد کیوں نہیں کیا جارہا اور باہر سے غیر منتخب ٹیکنوکریٹس کو لاکر کیوں مسلط کیا جارہا ہے۔ جب آزادی کے حوالے سے حکومت کی پوزیشن ایسی ہوگئی ہے کہ

دوسروں کو نصیحت
خود               میاں         فصیحت

اپنا تبصرہ بھیجیں