نبیل گبول کو خدا کی قسم کیوں کھانا پڑی

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما نبیل گبول نے دعویٰ کیا ہے کہ مشیرخزانہ حفیظ شیخ اور وزیراعظم کے درمیان اختلافات پیدا ہوئے ہیں اور حفیظ شیخ بھی جلد استعفیٰ دے دیں گے ۔ نبیل گبول نے دعویٰ کیا ہے کہ حفیظ شیخ نے عمران خان کو مدد کی مشکل صورتحال سے آگاہ کردیا ہے اور بتا دیا ہے کہ معیشت کو فوری طور پر سنبھال نہ میرے بس کا کام نہیں اس میں وقت لگے گا۔ نبیل گبول نے خدا کی قسم کھا کر کہا کہ ان کے اپنے گھر میں افطاری کے دوران دو مرتبہ لوڈشیڈنگ ہوئی جبکہ حکومت جھوٹے دعوے کررہی ہے کہ ملک میں لوڈ شیڈنگ نہیں ہو رہی۔ ڈبلیو غوول نے یہ سوال بھی اٹھایا ہے کہ اگر ہمارے دور کے وزیر خزانہ کو ہی لگانا تھا تو ہماری حکومت کو کیوں گالیاں دی جاتی تھی اور نواز شریف کو کیوں جیل بھیجا گیا ہے۔ نبیل گبول کے مطابق آج قرضے لینے کا نیا ریکارڈ قائم ہوچکا ہے جبکہ عوام کی یہ حالت ہے کہ افطاری پانی اور کھجوروں سے ہورہی ہے۔ آخر میں انہوں نے کہا کہ مہنگائی بہت بڑھ گئی ہے اور مہنگائی میں مزید اضافہ ہوگا کھانے والے دن موجودہ حالات سے زیادہ مشکل ہونگے۔


اپنا تبصرہ بھیجیں