67

پیسفک انٹرنیشنل کے سینئر مارکیٹنگ مینیجر ایم آمین جاکوانی کی جیوے پاکستان ڈاٹ کام سے خصوصی گفتگو ۔ ملاقات وحید جنگ

پاکستان میں گاڑیوں میں استعمال ہونے والے آڈیوسپیکر تیار کرنے والی پاکستان کی سب سے بڑی کمپنی پیسفک انٹرنیشنل نےگزشتہ دنوں ایک سو سینٹر کراچی میں منعقد ہونے والے ملک کے سب سے بڑے آٹو شو میں شرکت کی ایک بہت خوبصورت اسٹال لگایا جہاں بہت بڑی تعداد میں شہریوں نے رخ کیا اور معلومات حاصل کی یہاں بزنس ڈیل بھی ہوئی۔


اس آٹو شو کے موقع پر کیسے فک انٹرنیشنل کے سینئر مارکیٹنگ مینیجر ایم امین جاکوانی کی جیوے پاکستان سے خصوصی گفتگو ہوئی جو بھائی رین کی دلچسپی کے لئے یہاں پیش خدمت ہے۔
انہوں نے بتایا کہ یہ بہت اچھی نمائش ہے پاکستان میں ایسی نمائشوں کی بہت ضرورت ہے پاکستان میں مقامی آٹو انڈسٹری کو جتنا فروغ دیا جائے گا لوکل مینوفیکچرنگ میں اتنا ہی اضافہ ہوگا جس کے نتیجے میں روزگار کے نئے مواقع پیدا ہوں گے نوکریوں کا مسئلہ حل ہوگا جب نوجوانوں کو روزگار ملے گا نوکر یہ ملیں گی تو معیشت ترقی کرے گی۔
ایک سوال پر انہوں نے بتایا ہے کہ ہمارا اصل کام اسپیکر کا ر اڈیو اسپیکرز کا ہے ہم گاڑیوں میں استعمال ہونے والے آڈیو سپیکرز کی مینوفیکچرنگ کرتے ہیں 80% آڈیو اسپیکر دو گاڑیوں میں استعمال ہو رہے ہیں وہ ہماری کمپنی کے بنائے ہوئے ہیں انڈس موٹرز دیوان موٹرز ایسوزو گاڑیاں سب ہمارے اسپیکر استعمال کر رہی ہیں سوزوکی موٹر سے بھی بات چیت چل رہی ہے پاکستان بھر میں ہمارے اسپیکرز کامیاب ہیں اور ہمارے پاس بہت اچھی مارکیٹ ہے کوالٹی میں ہم برینڈڈ اسپیکرز کا بھی مقابلہ کر رہے ہیں۔
اس سوال پر کہ کیا ایکسپورٹ بھی ہو رہی ہے انہوں نے بتایا کہ ابھی اس کی تیاری کر رہے ہیں کوشش ہے کہ جلد پاکستان سے بہت سارے ملکوں میں ایک سپورٹ کریں پاکستان کا نام روشن کریں۔
آٹو انڈسٹری کی مشکلات کے حوالے سے سوال پر انہوں نے کہا کہ ٹیکس کے معاملے پر کچھ مشکلات آئیں ہیں حکومت سے بات چیت ہو رہی ہے اگر حکومت رائے دے گی تو انڈسٹری پر اچھا اثر پڑے گا حکومت سے توقع ہے کہ لوگ کل مینوفیکچرنگ کی مدد کرے گی پہلے بھی میں نے بتایا کہ جتنی لوکل پروڈکشن بڑھے گی اتنے ہی روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے جس کا مثبت اثر معیشت پر آئے گا آپ خود یہاں ایکسپو سینٹر میں دیکھ لیجیے بہت سے ملکوں کی کمپنیاں اور چینی کمپنیاں بھی یہاں اپنی مصنوعات لے کر آئی ہیں لیکن کسی کے پاس بھی اسپیکر نہیں ہے یہ صرف ہماری کمپنی ہے۔
الحمدللہ ہم اپنے کام سے مطمئن ہیں اور مزید محنت کر رہے ہیں نوجوانوں کے لیے کیا پیغام دیں گے اس بارے میں انہوں نے کہا کہ لوکل انڈسٹری کو چانس دیں مقامی مصنوعات کو فروغ دیں نوجوانوں کو چاہئے کہ روزگار کے مسائل حل کرنے کے لئے لوکل مصنوعات کو اپنائیں آٹو انڈسٹری کو فروغ دینا چاہیے انڈس موٹرز نے 65% اور سزوکی نے تقریبا پچاس ساٹھ فیصد اپنے پارٹس لوکل کر دیے ہیں کی اچھی پیش رفت ہے حکومت پاکستان کو اس حوالے سے پالیسی بنانی چاہیے اور اقدامات کرنے چاہیے آخر میں انہوں نے جیوے پاکستان ڈاٹ کام کی جانب سے آٹو شو کی کوریج اور انڈسٹری کے مسائل کو اجاگر کرنے اور اچھے کام کو سراہنے پر جیوے پاکستان کی تعریف کی اور نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں