نیوزی لینڈ میں سفید فام انتہا پسندوں کی مساجد پر بدترین دہشت گردی پر دنیا بھر کے مسلمانوں میں غم و غصہ

نیوزی لینڈ میں مساجد پر حملہ کرنے والے سفاک دہشت گردوں نے مسلمان عورتوں اور بچوں کو بھی نہیں بخشا سب سے زیادہ افسوس نہایت شرمناک پہلو یہ ہے کہ اس تمام کارروائی کو فیس بک پر براہ راست دنیا بھر کو دکھایا گیا بعدازاں پولیس کے کہنے پر اگرچہ سوشل میڈیا سے بھی مواد ہٹایا جارہا ہے لیکن دنیا بھر میں جس نے بھی دیکھا وہ دہل گیا لرز اٹھا ۔گرفتاری کے بعد دہشتگرد خود تو آسٹریلوی باشندے کے طور پر شناخت ہوا اور مختلف علاقوں میں یہ خاتون سمیت اس کے تین ساتھی بھی بگڑے گا مذکورہ دہشت گرد کافی عرصے سے سوشل میڈیا پر مسلمانوں کے خلاف مواد پوسٹ کررہا تھا وہ لوگوں کو مسلمانوں پر حملوں پر اکسا رہا تھا اس نے تارکین وطن کے خلاف بھی پوسٹ لگائی تھی دنیا بھر میں اس واقعہ میں ہونے والے قیمتی جانی نقصان پر افسوس کا اظہار کیا جا رہا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں